گنز اینڈ روزز (قسط ٣٠)

(Hukhan, karachi)

سکندر خان اپنی جگہ سے کسی ٹینس بال کی طرح اچھل کر اپنے دو ساتھیوں کو
ہوا میں لیتا ہوا دیوار سے جالگا،،،!
ڈاکٹر انعم کی فلائنگ کِک اسکی گردن اور جبڑے کو پھاڑتی گئی اسکی آنکھوں
کی پتلیوں سے بھی ذیادہ جبڑا کھل چکا تھا،،،!

اس نے اپنے ساتھ زمین بوس ہونے والے چمچوں سے پوچھا، یہ مجھے اسی لڑکی
نےہی مارا ہے،،،؟
وہ دونوں ابھی بھی حیرتوں کے سمندر میں غوطہ زن تھے،،انہیں خود بھی یقین،،
نہیں تھا کہ شٹل کاک برقعے سے برآمد ہونےوالی ٹانگیں اتنی خطرناک تھیں،،،!
گل جان نے حیرت سے بالشت بھر کی لڑکی کو دیکھا،،،،!مگر اسے اپنےہاتھ کی،،
تکلیف یاد آئی تو فوراَ یقین ہوگیا کہ یہ اسی لڑکی نےہی مارا ہے،،،!!!

سکندر خان کےساتھی نے اپنی شارٹ گن کا رخ ڈاکٹر انعم کی طرف کر دیا،اسکی
انگلیاں گھوڑے کو حکم دینے ہی والی تھیں کہ جاناں (گل جان) نے اس کی گن
کو اپنے ہاتھوں سے دور کر دیا،،،اس نے قہر آلود نظروں سےجاناں کو دیکھا،،،!
وہ غصے سے بولی،،غیرت کرو،،لڑکی کی طرف گن کرتا ہے،،مردوں کیطرح مقابلہ
کرو،،،!!

انعم نے مسکرا کر جاناں کو دیکھا،،،آفندی ابھی یہ سب شروع کرنا نہیں چاہتا تھا
اسے باہر سے اشارے کا انتظار تھا،انعم کو اندازہ تھا مگر آفندی کو کوئی گالی دے
یہ اسکی برداشت سے باہر تھا،،،!!

لمحوں میں جاناں سمیت یہ سب اپنے شکاریوں پر پل پڑے،،رانانے ڈھونڈ کر اسے
جا دبوچاجس نے اسے لاٹھی ماری تھی،،،رانا کےپہلے ہی وار میں بزدل دشمن بے
ہوش کر زمین چاٹ رہا تھا،،،!

انعم نے کورال کی ناک پر ایسا وار کیا کہ وہ بلبلا اٹھا،آفندی نے سکندرخان کو دونوں
ہاتھوں سے اٹھاکر فضا میں بلند کیا اور ایسے دیوار پر دے مارا جیسے انسان نہیں
کپڑے کی گٹھری ہو،،،!

سکندر خان کے ساتھیوں کے اوسان خطا ہو چکے تھے،،،ان کا پہلی دفعہ ایسے ،،،
انسانوں سے پالا پڑا تھا جن کو انسانوں سے بندوقوں سے بالکل ڈر نہیں لگتا تھاحویلی
کے باہر دھماکوں کی آوازوں نے سکندر خان کے ساتھیوں کو دہلا کر رکھ دیا،،،!!

رانا نے یکدم حویلی سے باہر کو دوڑ لگا دی،،،،(جاری)
 

Email
Rate it:
Share Comments Post Comments
27 Apr, 2018 Total Views: 763 Print Article Print
NEXT 
About the Author: Hukhan

Read More Articles by Hukhan: 1026 Articles with 529316 views »

Currently, no details found about the author. If you are the author of this Article, Please update or create your Profile here >>
Reviews & Comments
Interesting,,,
By: Mini, mandi bhauddin on May, 12 2018
Reply Reply
0 Like
thx
By: hukhan, karachi on May, 14 2018
0 Like
super brother
By: sohail memon, karachi on Apr, 28 2018
Reply Reply
0 Like
thx
By: hukhan, karachi on May, 14 2018
0 Like
nice
By: rahi, karachi on Apr, 28 2018
Reply Reply
0 Like
thx
By: hukhan, karachi on May, 14 2018
0 Like
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.
MORE ON ARTICLES
MORE ON HAMARIWEB