مشہور پاکستانی جوڑوں کے درمیان عمر کا حیران کن فرق

 

عمر ہمارے معاشرے کی وہ چیز ہے جو شادی کے معاملے میں انتہائی اہمیت رکھتی ہے- جب کوئی رشتہ طے ہوتا ہے تو لڑکے اور لڑکی کی عمر اور ان کے درمیان عمر کے فرق کا ذکر لازمی کیا جاتا ہے- اکثر لوگوں کا ماننا ہوتا ہے کہ اگر لڑکا اور لڑکی کے درمیان عمر کا بہت زیادہ فرق ہوگا انہیں ایک دوسرے کو سمجھنے کے حوالے سے زندگی میں کئی مشکلات پیش آسکتی ہیں جس کا نتیجہ شادی کی ناکامی کی صورت میں بھی نکل سکتا ہے- تاہم اگر ہم بات کریں چند مشہور پاکستانی جوڑوں کے درمیان عمر کے فرق کی تو ہمیں ان جوڑوں کی عمروں میں انتہائی حیران کن فرق دکھائی دیتے ہیں جبکہ یہ مشہور جوڑے انتہائی کامیاب نجی زندگی گزار رہے ہیں- واضح رہے کہ مندرجہ ذیل تمام جوڑوں میں مردوں کی عمر خواتین سے زیادہ ہے-
 

مشہور پاکستانی کرکٹر وسیم اکرم اور ان کی اہلیہ شنیرا اکرم کی عمر میں 17 سال کا فرق ہے- یہ جوڑا سال 2013 میں رشتہ ازدواج میں منسلک ہوا-
 
پاکستانی فلموں کے ڈائریکٹر سید نور اور ان کی اہلیہ صائمہ جو کہ خود بھی مشہور فنکارہ ہیں کے درمیان عمر 16 سال کا فرق ہے- یعنی سید نور صائمہ سے 16 سال بڑے ہیں-
 
پاکستانی فاسٹ باؤلر شعیب اختر کی شادی رباب خان سے سال 2014 میں ہوئی- ان دونوں شخصیات کے درمیان بھی عمر کا فرق انتہائی حیران کن ہے- شعیب اختر اپنی اہلیہ سے 18 سال بڑے ہیں-
 
پاکستانی ڈراموں کے مشہور فنکاروں دانش تیمور اور عائزہ خان کی جوڑی سے کون واقف نہیں- اس جوڑے کی عمر میں 8 سال کا فرق ہے-
 
فرحان سعید اور عروہ حسین کی شادی سال 2014 میں ہوئی -اور ان دونوں شخصیات کی عمر میں 7 سال کا فرق ہے-
 
مشہور موسیقار گوہر ممتاز کی شادی سال 2014 میں ماڈل انعم احمد سے ہوئی- ان دونوں کی عمر میں 13 سال کا فرق ہے-
 
Email
Rate it:
Share Comments Post Comments
06 Oct, 2018 Total Views: 11919 Print Article Print
NEXT 
Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.
Age. Age is one of those things in our society that is taken a little too literally once you’re an adult. Everything from your education, to finding a job, saving up and getting married depends on your ‘age’. You must’ve heard the famous saying which is, ” Har cheez apni umer aur waqt ke hisaab se achi lagti hai”. Right? Maybe, heard that little too much?
MORE ON ARTICLES
MORE ON HAMARIWEB