نواز شریف اور مریم نواز پاکستان کے لیے روانہ، پارٹی کارکن اور نیب منتظر

13 Jul, 2018 وائس آف امریکہ اردو
سابق وزیر اعظم نواز شریف اور ان کی بیٹی مریم نواز لندن سے پاکستان کے لیے روانہ ہو گئے جہاں انہیں گرفتار کرنے کے لیے نیب حکام نے اپنی حکمت عملی تیار کر لی ہے۔دوسری جانب پاکستان مسلم لیگ نون کے عہدے دار اور کارکن نواز شریف کے استقبال کے لیے انتظامات کو آخری شکل دے رہے ہیں۔ سابق وزیر اعلیٰ پنجاب اور مسلم لیگ نون نے صدر شہباز شریف نے کہا ہے کہ وہ ایئر پورٹ پر نواز شریف کے استقبال کے لیے جائیں گے۔ انہوں نے اپنی پارٹی کے ورکروں کی رہائی کا مطالبہ کرتے ہوئے پنجاب کی عبوری حکومت پر انتخابات میں دھاندلی کرنے کا الزام لگایا ہے۔نواز شریف کی 84 سالہ والدہ نے وائس آف امریکہ کے ساتھ اپنے انٹرویو میں کہا ہے کہ وہ اپنے بیٹے اور پوتی کے ساتھ جیل جائیں گی۔گرفتاری اور استقبال کے اس عمل میں پنجاب کی عبوری حکومت اپنا ایک الگ کردار ادا کر رہی ہے اور ہمارے نمائندوں کے مطابق شہر بھر سے مسلم لیگ نون کے درجنوں کارکنوں کو گرفتار کر لیا گیا ہے تاکہ وہ لوگوں کو ایئر پورٹ پر لانے کے لیے کردار ادا نہ کر سکیں۔
 

Watch Live News

 مزید خبریں 
« مزید خبریں
Post Your Comments
Select Language: