آنے والی نسلیں یاد کریں گی عمرآن تجھے

Poet: Sheikh Khurram Asaf Ali
By: Khurram Asaf Ali, Oslo

آنے والی نسلیں یاد کریں گی عمرآن تجھے
تیرا ُمقام ہے کیا کہاں معلوم تجھے

چاند جو ُاجالے میں چمکے وہ ُروشن ِستارہ ہے تو
آنے والی نسلیں یاد کریں گی عمرآن تجھے

قوموں کے خوابوں کی تعبیر جس سے وہ قائد ہے تو
بسیرا بلندیوں پہ شاہین کی پرواز عمرآن تجھے

پختہ ارادہ تیرا، ایمان کی دولت سے سرشار ہے تو
قسمت سے ملے کوئی رہبر ایسا ، کیا خبر عمرآن تجھے

انسانیت سے بھرپور سچ کی کمان سے نکلا ِتیر ہے تو
نہ سمجھ ہے قوم تیری ، پہچان نہ سکی عمرآن تجھے

باطل کا بسیرا چاروں اوڑھ حق کا ِسپاہ ِسلار ہے تو
شمار ہو گا نام تیرا عزیم ہستیوں میں کہاں خبر عمرآن تجھے
 

Rate it:
09 Oct, 2019

More Political Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Khurram Asaf Ali
Visit 11 Other Poetries by Khurram Asaf Ali »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

this is not balanced

By: Ahmed Abdullah, Gujrat on Oct, 13 2019

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City