میں اپنی دوستی کو شہر میں رسواء نہیں کرتی
Poet: Parveen Shakir
By: sumaira, khi

میں اپنی دوستی کو شہر میں رسواء نہیں کرتی
محبت میں بھی کرتی ہوں مگر چرچا نہیں کرتی

جو مجھ سے ملنے آ جائے میں اس کی دِل سے خادم ہوں
جو اٹھ کے جانا چاھے میں اسے روکا نہیں کرتی

جسے میں چھوڑ دیتی ہوں اسے پِھر بھول جاتی بوں
پِھر اس ہستی کی جانب میں کبھی دیکھا نبیں کرتی

تیرا اصرار سر آنكھوں پہ کے تم کو بھول جاؤں میں
میں کوشش کر کے دیکھوں گی مگر وعدہ نہیں کرتی

Rate it: Views: 507 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 26 Oct, 2016
About the Author: owais mirza

Visit Other Poetries by owais mirza »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
Way janab
By: mr jamil, karachi on Mar, 14 2017
Reply Reply to this Comment
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.