خیال میرے خواب ِخرگوش
Poet: نعمان صدیقی
By: Noman Baqi Siddiqi, Karachi

خیال میرے خواب ِخرگوش
کہتا ہے یہ ہر ذی ہوش

کان میں میرے کوئ کہتا ہے
کُچھ نہ کرنا رہ مدہوش

بابا کہتا نہ کر سُستی
عمل میں آجا اے بے ہوش

نتیجہ اس کا کیا نکلے گا پھر کھو دیے میں نے ہوش

عشق کی کچھ نہ آئ سمجھ
کس کو دوں میں دوش

کہتے ہیں وہ نہ بولو تم
ہو گیا میں خاموش

تیرا کام نہیں نعمان
ہو جاؤ تم روپوش

Rate it: Views: 0 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 06 Nov, 2018
About the Author: Noman Baqi Siddiqi

Visit 50 Other Poetries by Noman Baqi Siddiqi »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.