منزل کے کھوج میں اکثر
Poet: Usman Tarar
By: Usman Tarar, Hafizabad

منزل کے کھوج میں اکثر راہیں بدلتی رہیں
بھٹکے ہوئے مسافروں کی نوائیں بدلتی رہیں

رشتے کے باوجود مجھے لا تعلق ٹھرایا گیا
وقت کے ساتھ ساتھ میری سزائیں بدلتی رہیں

طلب کے ساتھ وفا کا مفہوم بدل دیا گیا
اس دور میں محبت کی اصطلاحیں بدلتی رہیں

کبھی پھولوں سے سج گئے کبھی پتے بھی چھٹ گئے
موسم کے ساتھ پیڑوں کی ردائیں بدلتی رہیں

عمر کے ساتھ ساتھ سوچ بھی پختہ ہوتی گئی
عثمان فیصلے بدلتے رہے، انائیں بدلتی رہیں

ہر قدم پہ مجھ کو مشکلات کا سامنا رہا
مجبوریوں کے تحت میری دعائیں بدلتی رہیں

Rate it: Views: 1470 Post Comments
 PREV More Poetry NEXT 
 More Love / Romantic Poetry View all
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 04 Apr, 2009
About the Author: Usman Tarar

Visit 72 Other Poetries by Usman Tarar »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
Very nice. GOOD LUCK

By: Riaz, Hafizabad on Jan, 16 2013
Reply Reply to this Comment
DEAR UR POETRY IS VERY NICE
By: SUMER ALI, TANDO ADAM on Jul, 30 2009
Reply Reply to this Comment
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.