"فنا"
Poet: ام بلال ریاض
By: ام بلال, ریاض

ضرورت تو اسکی کبھی نہ ہوئی پوری
ہوتا اسپر کسی فقیر کا گماں ہے

جب سے نکالا ہے قدم عورت نے گھر سے
گھر اسکا بن گیا اب مکان ھے

دنیا میں خوشیاں تلاش کرتے کرتے
زندگی بن گئی اب جھنم نما ہے

مزدور بناتا ہے دوسروں کے گھر اور محل
مگر اسکے سر پر خود کھلا آسماں ہے

جس نے بھی جانا دنیا کو فنا ہے
اسی کے لیئے پھر رب کے یہاں اماں ہے

Rate it: Views: 5 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 05 Jan, 2018
About the Author: ام بلال

Visit 17 Other Poetries by ام بلال »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
اسلام و علیکم۔ آپ کی ساری نظمیں میں نے پڑھی ہے۔ یہ ان سب میں سے سب سے اچھی ہے۔ مجھے آپ سے ملنے کا بہت شوق ہے۔آپ بہت اچھا لکھتی ہیں۔ ماشاءالله
By: Palvisha, karachi on Feb, 08 2018
Reply Reply to this Comment
اسلام و علیکم۔ بہت اچھی نظم ہے۔ ما شاءالله۔ ماشاء الله
By: Neelam, karachi on Feb, 08 2018
Reply Reply to this Comment
اسلام وعلیکم۔ بہت خوب ۔زبردست ۔الله سبحان و تعالی ہم سب کواچھا اور با عمل مسلمان بنایے۔ آمین
By: daughter , karachi on Jan, 31 2018
Reply Reply to this Comment
Assalam-0-Aliquim. verrrrrrrrrrry good Ma-Shah-Allah
By: poet, karachi on Jan, 31 2018
Reply Reply to this Comment
Assalam-o-Aliquim. very beautiful and heart touching poem. keep it up.
By: daughter , karachi on Jan, 31 2018
Reply Reply to this Comment
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.