مسکراتی ہے چاندنی دیکھو
Poet: wasim ahmad moghal
By: wasim ahmad moghal, lahore

مسکراتی ہے چاندنی دیکھو
گُدگُداتی ہے چاندنی دیکھو

کچھ سناتی ہے چاندنی دیکھو
کچھ بتاتی ہے چاندنی دیکھو

اپنی نرم و گداز کرنوں سے
کیوں جگاتی ہے چاندنی دیکھو

کس کے ہونٹوں کو چوم آئی ہے
کھل کھلاتی ہے چاندنی دیکھو

کس کی زُلفوں کو چھو کے آئی ہے
ہوش اُڑاتی ہے چاندنی دیکھو

کس کی آنکھوں سے پی کے آئی ہے
ڈگمگاتی ہے چاندنی دیکھو

سازِ فطرت بجا رہا ہے کوئی
گیت گاتی ہے چاندنی دیکھو

ساتھ اُس کے ہوا بھی ہے ٹھنڈی
تھپتھپاتی ہے چاندنی دیکھو

کون آیا ہے دوستو بولو
جگمگاتی ہے چاندنی دیکھو

کس سے مل کر یہ آ رہی ہے حضور
چہچہاتی ہے چاندنی دیکھو

آج تُو جونہیں ہے پاس مرے
پھر ستاتی ہے چاندنی دیکھو

مجھ پہ باتیں بنا رہی ہے یہ
کیوں رُلاتی ہے چاندنی دیکھو

میں نے اِس کا کیا بگاڑا ہے
کیوں جلاتی ہے چاندنی دیکھو

Rate it: Views: 8 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 03 Jun, 2018
About the Author: wasim ahmad moghal

Visit 151 Other Poetries by wasim ahmad moghal »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
محترمہ عظمیٰ صاحبہ
خوبصورت الفاظ میں غزل کو سراہنے کا تہہ دل شکریہ قبول فرمائیں
اور مزید یہ کہ دوبارہ واپسی پر خوش آمدید کہنے کا بھی شکریہ
آپ کا مخلص۔۔۔۔۔وسیم
By: wasim ahmad moghal, lahore on Jun, 24 2018
Reply Reply to this Comment
coming back after a long time
with sweet & charming words
nice as before
be happy and stay blessed always
By: uzma, Lahore on Jun, 04 2018
Reply Reply to this Comment
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.