شبِ تاریک میں---
Poet: UA
By: UA, Lahore

شبِ تاریک میں
اَےہاتھ چھڑانے والے
چاندنی رات میں
تم نے جو قَسم کھائی تھی
اس قَسم کا ہی کوئی پاس کرلیا ہوتا
اس قَسم کا ہی کوئی پاس کرلیا ہوتا
شبِ تاریک میں
اَےہاتھ چھڑانے والے

Rate it: Views: 2 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 01 Aug, 2018
About the Author: uzma ahmad

sb sy pehly insan phr Musalman and then Pakistani
broad minded, friendly, want living just a normal simple happy and calm life.
tmam dunia mein amn
.. View More

Visit 2695 Other Poetries by uzma ahmad »
 Reviews & Comments
حالانکہ بتایا بھی تھا کہ
"ہو چاندنی جب تک رات
دیتا ہے ہر کوئی ساتھ
تم مگر اندھیروں میں
"نہ چھوڑنا میرا ہاتھ
By: Gull, karachi on Aug, 01 2018
Reply Reply to this Comment
چاندنی رات میں
جو تم نے
قسم کھائی تھی
اس قسم کا ہی
کوئی پاس کر لِیا ہوتا
اس قسم کا ہی
کوئی پاس کر لِیا ہوتا
By: uzma, Lahore on Aug, 01 2018
Reply Reply to this Comment
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.