بے وفاؤں کو با وفا سمجها

Poet:
By: Shahid Hasrat, Multan

اب کیا باقی رہا کہانی میں
'ہیرو' ہی مر گیا جوانی میں

رک گئی ہے روانی دریا کی
اس نے ڈالے ہیں پاؤں پانی میں

بے وفاؤں کو با وفا سمجها
عمر گزری ہے خوش گمانی میں

زندگی بهر کا ساتهہ چهوٹ گیا
ایک لمحے کی بد گمانی میں

دے کے ہم کو بہشت کا لالچ
اس نے رکها جہان_فانی میں

اپنی آنکهوں کو کهو دیا ہم نے
تیرے خوابوں کی پاسبانی میں

ایک عاشق نے خودکشی کرلی
ڈوب کر ایک چلو پانی میں

Rate it:
17 Oct, 2018

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Shahid Hasrat
Visit 264 Other Poetries by Shahid Hasrat »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City