کوئی فیصلہ جو اس کو سنایا نہ جائے گا

Poet: وشمہ خان وشمہ
By: وشمہ خان وشمہ, ملایشیا

کوئی فیصلہ جو اس کو سنایا نہ جائے گا
اپنا بھی حال دل کو بتایا نہ جائے گا

بیٹھی ہوں انتظار میں بے چینیاں لیے
اس کا پتہ سفر میں د یا نہ جائے گا

تنہائیاں رفیق رہی ہیں تمام عمر
قرطاس پر بھی چہرہ سجایا نہ جائے گا

یہ درد ہر مقام پہ رکھے گا مضطرب
جب اجنبی کو دل سے ہی جایا نہ جائے گا

نصرت نصیب ہوگی حریفوں کے درمیاں
دشمن کو اب چراغ دکھایا نہ جائے گا

اس کا رہا جدائی میں غیروں سے واسطہ
اپنوں کو دل میں آج بھی آیا نہ جائے گا

وشمہ نہ ہوگا پیار پہ آہوں کا کچھ اثر
اس زندگی کو کچھ بھی بھلایا نہ جائے گا

Rate it:
27 Oct, 2018

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: washma khan washma
I am honest loyal.. View More
Visit 4523 Other Poetries by washma khan washma »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City