شمع اُس کی یاد کی جلائے رکھی

Poet: Sobiya Anmol
By: sobiya Anmol, Lahore

شمع اُس کی یاد کی جلائے رکھی
ریت رسم سب وفا کی نبھائے رکھی

بھول کے بھی اُسے بھولنا نہ چاہا
محبت کی دُنیا قلب میں جگائے رکھی

اپنی آ نکھوں میں اُس کا چہرہ رکھا
وفا کے پھولوں کی سیج سجائے رکھی

وہ بھی دل ہی دل میں چاہتا رہا
ہم نے بھی چاہت آنکھوں پہ بٹھائے رکھی

رکھا ہر احترام ہم نے محبت کا
مگر یہ بات اُس سے چھپائے رکھی

وہ مجبور اپنی حیا سے رہا سدا
ہم نے اندیشہء مفر سے دبائے رکھی
 

Rate it:
27 Oct, 2018

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: sobiya Anmol
what can I say,people can tell about me... View More
Visit 128 Other Poetries by sobiya Anmol »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City