زندہ رہنے کی دُعا دیتا ہے

Poet: Sobiya Anmol
By: sobiya Anmol, Lahore

زندہ رہنے کی دُعا دیتا ہے
ہر بار یہ ہی سزا دیتا ہے

گِلے رکھتا ہے سدا لبوں پہ
محبتیں سب بھُلا دیتا ہے

جب بھی آتا ہے سامنے میرے
ظالم مجھے رُلا دیتا ہے

لکھتا ضرور ہے نام میرا
لکھ لکھ کے مٹا دیتا ہے

دکھاتا ہے مجھے نفرت اپنی
نفرتیں دے کے جلا دیتا ہے

راتوں کو بھی سونے نہیں دیتا
سپنوں میں آ کے جگا دیتا ہے

ماتم کرواتا ہے آ دھی رات مجھ سے
گنہگار مجھے بنا دیتا ہے

زخم دیتا ہے سینے پہ میرے
پھر دے کے دُکھا دیتا ہے

اُمید لگاتا ہے ہر بار مجھے
پھر امید کا دیہ بُجھا دیتا ہے

ہوا پہ میرا گھر بناتا ہے
بنا کے میری اوقات دِکھا دیتا ہے

Rate it:
28 Oct, 2018

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: sobiya Anmol
what can I say,people can tell about me... View More
Visit 128 Other Poetries by sobiya Anmol »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City