اُلجھی اُلجھی ہر سانس ہے کل سے

Poet: Sobiya Anmol
By: sobiya Anmol, Lahore

اُلجھی اُلجھی ہر سانس ہے کل سے
میرا خانۂ قلب اُداس ہے کل سے

کہیں وقتِ رُخصت تو نہ آیا سر پہ
لمحاتِ حیات کا مجھے احساس ہے کل سے

چھوڑ رکھا تھا اسے یاد کرنا کب سے
اُس کے آنے کی آس ہے کل سے

پیار دنیا سے بھی کچھ کچھ ہونے لگا
ہر موقعِ ماضی پاس پاس ہے کل سے

یہ کیا ہے کیوں نہیں جانتے ٗٗٗٗ مگر
ہوا تو ضرور کچھ خاص ہے کل سے

مَیں مر گیا تھا جو کبھی میرے اندر
جاگ گیا ٗٗٗٗٗٗٗٗمجھ سے روشناس ہے کل سے

برسوں سے اِسی آس پہ تھا یہ
مگر اب وقت پہ بدحواس ہے کل سے

Rate it:
29 Oct, 2018

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: sobiya Anmol
what can I say,people can tell about me... View More
Visit 128 Other Poetries by sobiya Anmol »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City