لوٹ چلتے ھیں

Poet: Sahib
By: sahib, Multan

چلو نہ لوٹ چلتے ہیں انہی راہوں میں ملتے ھیں
وہ تانے پھر سے بنتے ھیں چلو نہ لوٹ چلتے ھیں

نئے مسافروں کی ہمراہی سے اکتآ گئے ھیں
پرانی منزلوں کی طرف چلونہ لوٹ چلتے ہیں

بڑی آس ہے کسی کو محبت کی قسم کی
وعدے کی پاسداری کو چلو نہ لوٹ چلتے ھیں

آنسو دینے والوں کے لب فریاد کرتے ھیں
کسی کو معاف کرنے کو چلو نہ لوٹ چلتے ھیں

محبت زندگی میں کھول کر خوشیاں سمیٹیں گے
دلوں کی راحتوں کے لئے ہی چلو نہ لوٹ چلتے ھیں

آشیاں پھر سے بنتے ھیں پرانی منزل پہ چلتے ھیں
چلو نہ لوٹ چلتے ھیں ، چلو نہ لوٹ چلتے ھیں

Rate it:
09 Nov, 2018

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: sahib
Visit 13 Other Poetries by sahib »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City