کچھ بھی نہیں ہے پاس ہماری مثال دے

Poet: وشمہ خان وشمہ
By: وشمہ خان وشمہ, ملایشیا

کچھ بھی نہیں ہے پاس ہماری مثال دے
اس شہر بے چراغ میں اک یہ وبال دے

ہاتھوں میں میرے چاند ستارے نہیں تو کیا
دل میں ترے یقین کا روشن کمال دے

رستے کی مشکلوں سے ہراساں ہے کس لیے
جس کا نہیں ہے کوئی بھی اسکی وصال دے

کس سے چھپا رہا ہے تو دل کی کہانیاں
وہ حال روز و شب سے مرے یہ نکال دے

وقت اور مقام سے نہ کبھی ہم گزر سکے
گزرے مقام و وقت کا کوئی سا سال دے

کتنے ہی پیڑ خوف خزاں سے اجڑ گئے
کچھ برگ سبز وقت سے پہلے ہی ٹال دے

وشمہ کسی سے لاکھ بہانے کرے مگر
لیکن بچھڑ کے تجھ سے بھی وہ ملال دے

Rate it:
10 Nov, 2018

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: washma khan washma
I am honest loyal.. View More
Visit 4523 Other Poetries by washma khan washma »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City