مری تباہی کا تجھ کو ملال تو ہو گا

Poet: عذرا ناز
By: عذرا ناز, Reading UK

مری تباہی کا تجھ کو ملال تو ہو گا
رفاقتوں کا ذرا سا خیال تو ہو گا

ہیں سارے شہر میں چرچے تری ذہانت کے
حسین بھی ہے تو پھر بے مثال تو ہو گا

کسی شکاری نے دانہ یونہی نہیں پھیکا
بچھا ہوا پسِ منظر میں جال تو ہو گا

اسی خیال میں سوئی نہیں ہوں شب بھر میں
جو ہے مرا،وہی تیرا بھی حال تو ہو گا

امیرِ شہر کی کھل کر مخالفت کی ہے
اب اس کے شہر میں رہنا محال تو ہو گا
 

Rate it:
06 Jan, 2019

More Life Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Azra Naz
My First Poetry Book DASHT E JAAN is published now and available in market.I am a caring,loving and fair play person.
Believe in truth , honesty and
.. View More
Visit 250 Other Poetries by Azra Naz »

Reviews & Comments

اسلام عليڪم
کیا ہی خوبصورت غزل
مختصر مگر تجربات سے کا نچوڑ
بھئ واہ
آپ کا برو
ندیم مراد

By: ندیم مراد , پیٹرمیرڈزبرگ ،جنوبی افریقہ on Apr, 06 2019

کیا خوبصورت مطلع ہے اور اس کےبعد یہ شعر
اسی خیال سے سوئی نہیں ہوں شب بھر میں
جو ہے مرا وہی تیرا بھی حال تو ہو گا
مدتوں بعد دل میں اتر جانے والی غزل پڑھنے کو ملی ہے۔
ہماری ویب پر واپس آنے کا میں تہہ دل سےآپ کا خیر مقدم کرتا ہوں امید ہے آئندہ بھی نوازشات کا سلسلہ جاری رہے گا
آپ کا مخلص۔۔۔۔۔وسیم

By: Wasim Ahmad Moghal, Lahore on Jan, 09 2019

اِسی خیال میں سوئی نہیں ہوں شب بھر میں
جو ہے میرا، وہی تیرا بھی حال تو ہوگا
کیا کہنے بہت خوب آداب عرض ڈئیر اینڈ سویٹ بعد مدّت جلوہ افروز ہوئیں آپ اِس بزم میں اچھا لگا
سدا خوش رہیں عداّں میں یاد رکھءیے گا

By: uzma ahmad, Lahore on Jan, 08 2019

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City