سبب اچھا ہے

Poet: قاسم رضا
By: QASIM RAZA, rawalpindi

نہ ہو فکر ے مال و یار تو کیا اچھا ہے
بے خیال و مست ہو زندگی تو کیا اچھا ہے
نا کوئی پوچھے مجھ سے کہ تجھ میں کیا رکھا ہے
اور نہ ہی میرا ہو کوئی شریک خیال تو کیا اچھا ہے
اک ترنم پہ گزر جائے بس زندگی اپنی
بس اِک میں ہمنوا ہو میرا تو کیا اچھا ہے
مگر خقیقت کچھ الگ سی ہے اس سے
تلخ جو گزر گیا وہ بھی اور جو گزرنے والا ہے،کہنا کی سب اچھا ہے
وہ جس خال میں بھی رکھے اچھا ہے بہت اچھا ہے قاسم
بس اک ہمزاج مل جایے تو سب اچھا ہے

Rate it:
02 Feb, 2019

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: QASIM RAZA
Visit Other Poetries by QASIM RAZA »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City