کامران کی کامیابی

Poet: نواب رانا ارسلان
By: نواب رانا ارسلان, Ismailabad, Umerkot

پیارے کزن کامران کی کامیابی پہ خاکسار کے چند اشعار

تجھے دیکھ کر اُنچان پہ میرے بیاں کا یہ انداز ہے
چشمِ ارسلان خوشی سے یوں سیلاب ہے

بہار آئی ہے اے مسافر کہ منزل ہے قریب
تو دیکھ راحتِ اہلِ خانہ کہ کس طرح مہتاب ہے

اے مہتاب فشاں تو سبق ہے دہر کے لیے
محنت کش کیلئے ہر چیز یہاں دستیاب ہے

تہی دستی کو تیری حقارت سے دیکھنے والے کامران
حیران تو ہیں، کیوں کہ آج تیرا ہنر افشائے راز ہے

بامراد رہے تو زندگی کی ہر مراد میں
تیرے لیے خاکسار کے یہ چند الفاظ ہے

یوں تو اَن گنت ہے تعریف تیری کامرانی کی
بس اتنا کہہ دوں یار تجھ پہ ہمیں ناز ہے

Rate it:
01 Mar, 2019

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: نواب رانا ارسلان
Visit 28 Other Poetries by نواب رانا ارسلان »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City