ترانہ دل کا

Poet: Asad
By: Asad, mpk

 چلو فھر سے لکھیں کوئی فسانہ دل کا۔۔۔۔
اپنی محبت میں ڈوبا کوئی ترانہ دل کا۔۔۔

وہ آٹھوں پہر کاٹنا تمھاری گلی کے چکر۔۔۔
کیوں نہ لکھیں وہ ھر ایک بہانہ دل کا۔۔۔۔

ہاں یاد ھیں تمہیں کچھ پیار کی وہ باتیں؟؟
یا بھول گئے تم ھر ایک خزانہ دل کا

ہاں مجھ کو یاد ھے وہ پہلی بار کا ملنا
میں کیسے بھول سکتا ھوں پل سہانہ دل کا

وہ تیری نگاہ ناز کا اٹھنا کیا لکھوں میں ؟؟
بس ھیچ تھا سارا عالم اپنے زمانہ دل کا

دل یہ اپنا چاہا کہ فدا تجھ پر کر دیں
زندگی کا اپنی لٹا دیں سارا خزانہ دل کا

اسد تا مرگ بھی بھلائے نہیں بھولے گا
یار وہ پہلی بار تیرا مسکرانا دل کا

Rate it:
02 Mar, 2019

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Asad
Visit 48 Other Poetries by Asad »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City