اقبالؔ کے شاہین دیوانے ہو گئے

Poet: نواب رانا ارسلان
By: نواب رانا ارسلان, Ismailabad, Umerkot

وہ دن تو اب پرانے ہو گئے
ماضی کے یوں افسانے ہو گئے

وہ شاعر جو محفلیں سجاتے تھے
اُنہیں دیکھے اب زمانے ہو گئے

چلو آؤ بزمِ سُخن پھر سے سجاتے ہیں
چھوڑو تنہائیاں اب بہت بہانے ہو گئے

چلو محبت کی راہ پہ چلتے ہیں
بہت غلط نشانے ہو گئے

غالؔب تیری غزلیں پڑھ کر
اقبالؔ کے شاہین دیوانے ہو گئے

جو چُن لیا شاعری کا راستہ
تو دل و جان محبت کے خزانے ہو گئے

اب تو داد دو میرے اشعار پہ
کم سُخن یہاں سے روانے ہو گئے

رو کر ساقی مجھے کہنے لگا
ارسلؔان تیرے جانے سے خالی میخانے ہو گئے

Rate it:
06 Mar, 2019

More Urdu Ghazals Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: نواب رانا ارسلان
Visit 28 Other Poetries by نواب رانا ارسلان »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City