مدتوں بعد آیا اک پیغام اس کا

Poet: ہارون الرشید اداس
By: Haroon Ur Rasheed uDas, Muzaffarabadak

مدتوں بعد پھر سے آیا ہے اک پیغام اس کا
لکھا ہے کسی غیر کے نام کے ساتھ نام اس کا

پڑھ رہا ہے نمازیں اب کسی کے نام کی
نام میرے سے کبھی تھا تازہ ایمان اس کا

یادیں، پیار، محبت، اور کچھ چند سی تصویریں
دل تا کمرہ میں ہر سو بکھرہ پڑہ سامان اس کا

چونک سا جاتا میں اب بھی کبھی کئی لمحے
سنوں، پڑھوں جو کبھی کیسے کوئی ہم نام اس کا

کہتا تھا رہ نہ پائے گا بچھڑ کر اک لمحہ بھی کبھی
مڑ کر بھی پھر نہ ملا کبھی کوئی سلام اس کا

آرزو ہی رہی سنوں کبھی اب جی بھر کے پھر کچھ
درد کے لمحوں میں خوشی کا احساس کلام اس کا

ہوتی ہے اذیت جسے اب میرے احوال پوچھنے پر اداسؔ
میرے صرف نام سے ہی مشروط تھا کبھی آرام اسکا

Rate it:
09 Jun, 2019

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Haroon Ur Rasheed uDas
Visit 43 Other Poetries by Haroon Ur Rasheed uDas »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City