Surah Dukhan with Urdu Translation

سورة الدخان

Para / Chapter
25 (Surah Ad-Dukhan)
Voice/Recited
Shaikh Abd-ur Rahman As-Sudais & Shaikh Su'ood As-Shuraim, Urdu Translation by Moulana Fateh Muhammad Jalandari
Left
right
شروع الله کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

حٰم ﴿۱﴾ اس کتاب روشن کی قسم ﴿۲﴾ کہ ہم نے اس کو مبارک رات میں نازل فرمایا ہم تو رستہ دکھانے والے ہیں ﴿۳﴾ اسی رات میں تمام حکمت کے کام فیصل کئے جاتے ہیں ﴿۴﴾ (یعنی) ہمارے ہاں سے حکم ہو کر۔ بےشک ہم ہی (پیغمبر کو) بھیجتے ہیں ﴿۵﴾ (یہ) تمہارے پروردگار کی رحمت ہے۔ وہ تو سننے والا جاننے والا ہے ﴿۶﴾ آسمانوں اور زمین کا اور جو کچھ ان دونوں میں ہے سب کا مالک۔ بشرطیکہ تم لوگ یقین کرنے والے ہو ﴿۷﴾ اس کے سوا کوئی معبود نہیں۔ (وہی) جِلاتا ہے اور (وہی) مارتا ہے۔ وہی تمہارا اور تمہارے باپ دادا کا پروردگار ہے ﴿۸﴾ لیکن یہ لوگ شک میں کھیل رہے ہیں ﴿۹﴾ تو اس دن کا انتظار کرو کہ آسمان سے صریح دھواں نکلے گا ﴿۱۰﴾ جو لوگوں پر چھا جائے گا۔ یہ درد دینے والا عذاب ہے ﴿۱۱﴾ اے پروردگار ہم سے اس عذاب کو دور کر ہم ایمان لاتے ہیں ﴿۱۲﴾ (اس وقت) ان کو نصیحت کہاں مفید ہوگی جب کہ ان کے پاس پیغمبر آچکے جو کھول کھول کر بیان کر دیتے ہیں ﴿۱۳﴾ پھر انہوں نے ان سے منہ پھیر لیا اور کہنے لگے (یہ تو) پڑھایا ہوا (اور) دیوانہ ہے ﴿۱۴﴾ ہم تو تھوڑے دنوں عذاب ٹال دیتے ہیں (مگر) تم پھر کفر کرنے لگتے ہو ﴿۱۵﴾ جس دن ہم بڑی سخت پکڑ پکڑیں گے تو بےشک انتقام لے کر چھوڑیں گے ﴿۱۶﴾ اور ان سے پہلے ہم نے قوم فرعون کی آزمائش کی اور ان کے پاس ایک عالی قدر پیغمبر آئے ﴿۱۷﴾ (جنہوں نے) یہ (کہا) کہ خدا کے بندوں (یعنی بنی اسرائیل) کو میرے حوالے کردو میں تمہارا امانت دار پیغمبر ہوں ﴿۱۸﴾ اور خدا کے سامنے سرکشی نہ کرو۔ میں تمہارے پاس کھلی دلیل لے کر آیا ہوں ﴿۱۹﴾ اور اس (بات) سے کہ تم مجھے سنگسار کرو اپنے اور تمہارے پروردگار کی پناہ مانگتا ہوں ﴿۲۰﴾ اور اگر تم مجھ پر ایمان نہیں لاتے تو مجھ سے الگ ہو جاؤ ﴿۲۱﴾ تب موسیٰ نے اپنے پروردگار سے دعا کی کہ یہ نافرمان لوگ ہیں ﴿۲۲﴾ (خدا نے فرمایا کہ) میرے بندوں کو راتوں رات لے کر چلے جاؤ اور (فرعونی) ضرور تمہارا تعاقب کریں گے ﴿۲۳﴾ اور دریا سے (کہ) خشک (ہو رہا ہوگا) پار ہو جاؤ (تمہارے بعد) ان کا تمام لشکر ڈبو دیا جائے گا ﴿۲۴﴾ وہ لوگ بہت سے باغ اور چشمے چھوڑ گئے ﴿۲۵﴾ اور کھیتیاں اور نفیس مکان ﴿۲۶﴾ اور آرام کی چیزیں جن میں عیش کیا کرتے تھے ﴿۲۷﴾ اسی طرح (ہوا) اور ہم نے دوسرے لوگوں کو ان چیزوں کا مالک بنا دیا ﴿۲۸﴾ پھر ان پر نہ تو آسمان کو اور زمین کو رونا آیا اور نہ ان کو مہلت ہی دی گئی ﴿۲۹﴾ اور ہم نے بنی اسرائیل کو ذلت کے عذاب سے نجات دی ﴿۳۰﴾ (یعنی) فرعون سے۔ بےشک وہ سرکش (اور) حد سے نکلا ہوا تھا ﴿۳۱﴾ اور ہم نے بنی اسرائیل کو اہل عالم سے دانستہ منتخب کیا تھا ﴿۳۲﴾ اور ان کو ایسی نشانیاں دی تھیں جن میں صریح آزمائش تھی ﴿۳۳﴾ یہ لوگ یہ کہتے ہیں ﴿۳۴﴾ کہ ہمیں صرف پہلی دفعہ (یعنی ایک بار) مرنا ہے اور (پھر) اُٹھنا نہیں ﴿۳۵﴾ پس اگر تم سچے ہو تو ہمارے باپ دادا کو (زندہ کر) لاؤ ﴿۳۶﴾ بھلا یہ اچھے ہیں یا تُبّع کی قوم اور وہ لوگ جو تم سے پہلے ہوچکے ہیں۔ ہم نے ان (سب) کو ہلاک کردیا۔ بےشک وہ گنہگار تھے ﴿۳۷﴾ اور ہم نے آسمانوں اور زمین کو اور جو کچھ ان میں ہے ان کو کھیلتے ہوئے نہیں بنایا ﴿۳۸﴾ ان کو ہم نے تدبیر سے پیدا کیا ہے لیکن اکثر لوگ نہیں جانتے ﴿۳۹﴾ کچھ شک نہیں کہ فیصلے کا دن ان سب (کے اُٹھنے) کا وقت ہے ﴿۴۰﴾ جس دن کوئی دوست کسی دوست کے کچھ کام نہ آئے گا اور نہ ان کو مدد ملے گی ﴿۴۱﴾ مگر جس پر خدا مہربانی کرے۔ وہ تو غالب اور مہربان ہے ﴿۴۲﴾ بلاشبہ تھوہر کا درخت ﴿۴۳﴾ گنہگار کا کھانا ہے ﴿۴۴﴾ جیسے پگھلا ہوا تانبا۔ پیٹوں میں (اس طرح) کھولے گا ﴿۴۵﴾ جس طرح گرم پانی کھولتا ہے ﴿۴۶﴾ (حکم دیا جائے گا کہ) اس کو پکڑ لو اور کھینچتے ہوئے دوزخ کے بیچوں بیچ لے جاؤ ﴿۴۷﴾ پھر اس کے سر پر کھولتا ہوا پانی انڈیل دو (کہ عذاب پر) عذاب (ہو) ﴿۴۸﴾ (اب) مزہ چکھ۔ تو بڑی عزت والا (اور) سردار ہے ﴿۴۹﴾ یہ وہی (دوزخ) ہے جس میں تم لوگ شک کیا کرتے تھے ﴿۵۰﴾ بےشک پرہیزگار لوگ امن کے مقام میں ہوں گے ﴿۵۱﴾ (یعنی) باغوں اور چشموں میں ﴿۵۲﴾ حریر کا باریک اور دبیز لباس پہن کر ایک دوسرے کے سامنے بیٹھے ہوں گے ﴿۵۳﴾ اس طرح (کا حال ہوگا) اور ہم بڑی بڑی آنکھوں والی سفید رنگ کی عورتوں سے ان کے جوڑے لگائیں گے ﴿۵۴﴾ وہاں خاطر جمع سے ہر قسم کے میوے منگوائیں گے (اور کھائیں گے) ﴿۵۵﴾ (اور) پہلی دفعہ کے مرنے کے سوا (کہ مرچکے تھے) موت کا مزہ نہیں چکھیں گے۔ اور خدا ان کو دوزخ کے عذاب سے بچا لے گا ﴿۵۶﴾ یہ تمہارے پروردگار کا فضل ہے۔ یہی تو بڑی کامیابی ہے ﴿۵۷﴾ ہم نے اس (قرآن) کو تمہاری زبان میں آسان کردیا ہے تاکہ یہ لوگ نصیحت پکڑیں ﴿۵۸﴾ پس تم بھی انتظار کرو یہ بھی انتظار کر رہے ہیں ﴿۵۹

BROWSE SURAH DUKHAN BY AYAT
Listen Surah Ad-Dukhan with Urdu Translation and read Urdu tarjuma by Moulana Fateh Muhammad Jalandari. Hamariweb.com provides full Surah Ad-Dukhan mp3 audio with Urdu text and video. You can also download Surah Ad-Dukhan in mp3 format for computer and mobile devices. Listen Surah Ad-Dukhan with Urdu translation of complete ayaats and tilawat in beautiful voices of Shaikh Abd-ur Rahman As-Sudais & Shaikh Su'ood As-Shuraim with reading Urdu tarjuma online.
Reviews & Comments

I love to read the translation of the Holy Qur’an. Once I read the translation of Surah
Dukhan as well. Trust me  you will find the real harmony of mind if you once recited it.

Laila, Yemen Thu 26 Oct, 2017

Surah Dukhan is the most precious Surah where the significance of one important Layl 'Night' which is better than thousands of Night. The recitation of Surah Dukhan in Laylat Ul Qadr is good for the Muslims.

basit, khi Tue 08 Nov, 2016

I am a practicing Muslim and was looking for some religious lectures, but this is what I found while browsing. Have chosen Surat Ad Dukhan in Arabic in audio version to listen and educate myself.

Akram, khi Sun 05 Jun, 2016

The recitation of Surah Ad Dukhan protect you from Pul-e-Siraat on the Day of Judgement. Every muslim should recite this Surah at least at the day of Jumma to achieve its benefits.

Qabila, khi Fri 08 Apr, 2016

The beautiful Surah Dukhan shows the importance of Shab e Qadr as well this Surah also give us some information about the most historical event which is known as Waqia a Meraj in Islam.

mustafa, khi Tue 05 Apr, 2016

I always recite Surah Dukhan in those nights in which Allah tell us the worship in these nights are much better than thousands nights. Lailat Ul Qadar is the most precious night for the muslims.

ahmad, khi Fri 12 Feb, 2016
MORE ON ISLAM
MORE ON HAMARIWEB