آئندہ ترقیاتی بجٹ 1837 ارب روپے ہو گا: خسرو بختیار

اسلام آباد(نیو زڈیسک) وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی خسرو بختیار کا کہنا ہے کہ حکومت معیشت کے استحکام کے لیے بھرپور اقدامات کر رہی ہے۔ آئندہ ترقیاتی بجٹ 1837 ارب روپے ہو گا۔سالانہ منصوبہ بندی رابطہ کمیٹی (اے پی سی سی) کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ شدید مالی مشکلات کے باوجود اگلے مالی سال کے پی ایس ڈی پی میں کچھ نئے اور اہم سیکٹرز کے لیے رقم مختص کی گئی ہے جس میں کلین گرین پاکستان، موسمیاتی تبدیلی، نالج اکانومی، انسانی وسائل کی ترقی، زراعت کی ترقی اور علاقائی مساوی ترقیاتی پروگرام کے منصوبے شامل ہوں گے۔وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ سالانہ بجٹ ترتیب دیا جا رہا ہے، 2019-20ء کا ترقیاتی بجٹ 1837 ارب روپے ہوگا۔ 925 ارب وفاقی پی ایس ڈی پی ہو گا، صوبوں کے لیے 912 روپے رکھنے کی تجویز ہے۔ 250 ارب روپے کے پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ کے لیے رکھے گئے ہیں، 675 ارب پی ایس ڈی پی کے تحت لے کر چلیں گے۔ان کا کہنا تھا کہ زراعت کے بجٹ میں اضافہ کیا گیا ہے۔ نالج اکانومی کے سلسلے میں بھی بڑا قدم اٹھایا گیا ہے، کم ترقی یافتہ علاقوں کی ترقی کے لیے بھی فنڈز رکھے گئے ہیں، فاٹا ڈویلپمنٹ کے لیے فنڈز مختص کیے ہیں۔وزیر منصوبہ بندی کا کہنا تھا کہ سی پیک کے ایسٹرن کوریڈور، سکھر حیدرآباد بی او ٹی پر اسی سال کام شروع ہو گا، 80 فی صد تک مکمل منصوبوں کو مکمل فنڈنگ دی جائیگی۔خسرو بختیار کا مزید کہنا تھا کہ ترقیاتی پروگرام جو بنا رہے ہیں اس سے بہتر نہیں بنا سکتے تھے، گزشتہ حکومت نے 2 کھرب کے 393 منصوبے پلان میں ڈالے جبکہ ہمارا پلان پاکستان میں یکساں ترقی کا ہے، بیرونی اداروں سے 250 سے 300 ارب ملنے کی امید ہے۔اجلاس میں صوبائی وزراء، صوبوں کے نمائندے، وفاقی سیکرٹریز اور تمام وزارتوں کے اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔ اجلاس میں وزارت منصوبہ بندی کے ظفر الحسن نے موجودہ مالی سال کی معاشی کارکردگی پر شرکاء نے بریفنگ دی اور اگلے مالی سال کے معاشی اہداف پیش کئے۔

 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.