وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کاموسلادھاربارش کے دوران لاہور کے مختلف علاقوں کا دورہ

لاہور (ویب ڈیسک)وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کاموسلادھاربارش کے دوران لاہور کے مختلف علاقوں کا دورہ۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے خود گاڑی ڈرائیو کی۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے شملہ پہاڑی،بوہڑ والا چوک،مال روڈ،منٹگمری روڈ،لکشمی چوک،جی پی او چوک اوردیگر علاقوں میں شدیدبارش کے بعد پیدا ہونے والی صورتحال کا جا ئزہ لیا۔وزیراعلیٰ پنجاب نے بارش کے پانی میں پھنسی خواتین اوربچوں کو اپنی گاڑی میں بیٹھایا اورانہیں ان کے متعلقہ مقام پر پہنچایا۔وزیراعلیٰ نے نکاسی آب کے انتظامات کا جائزہ لیا۔جتنی جلدی ممکن ہوسکے نکاسی آب کا کام مکمل کیا جائے۔نکاسی آب کے لئے تمام تر وسائل اورمشینری بروئے کار لائی جائے۔وزیراعلیٰ کی انتظامیہ اور واسا حکام کوپانی کے نکاس کی خود نگرانی کرنے کی ہدایت۔انتظامی افسرا ن اورواسا حکام نکاسی آب مکمل ہونے تک فیلڈ میں خود موجود رہیں۔بارش کے دوران سڑکوں پر ٹریفک رواں دواں رکھنے کیلئے ٹریفک پولیس مستعدی سے کام کرے۔لاہور کو پیرس بنانے کا دعوی کرنے والوں نے شہر میں پانی کے نکاس کا کوئی منصوبہ نہیں بنایا۔شہر میں سفید ہاتھی نما منصوبہ بنانے والوں نے نکاسی آب کا بنیادی انتظام نہیں کیا۔ شہریوں کی مشکلات کا جلد ازالہ کیا جائے گا۔میں عوام سے ہوں اورعوام کی مشکلات کے جلد ا زالے کیلئے انتظامیہ کو متحرک کردیاہے۔ترجمان وزیراعلیٰ پنجاب ڈاکٹر شہبازگل وزیراعلیٰ کے ہمراہ تھے۔علاوہ ازیںوزیراعلی پنجاب کا حالیہ بارش کے بعد شہر میں نکاسی آب کی صورتحال جاننے کیلئے سیف سٹیز اتھارٹی کا دورہ۔مانیٹرنگ سینٹر سے شہر کے مختلف مقامات پر کھڑے پانی اور نکاسی آب کے آپریشن کا جائزہ لیا۔وزیراعلیٰ نے کیمروں کے زریعے شہر کا جائزہ لیا اور انتظامیہ کو ضروری ہدایات دیں۔تمام متعلقہ افسران فیلڈ میں جائیں اور شہریوں کی سہولت کیلئے فوری اقدامات کریں۔ترجمان وزیراعلیٰ پنجاب ڈاکٹر شہباز گل بھی ہمراہ ہیں۔ایم ڈی سیف سٹیز علی عامر ملک اور چیف آپریٹنگ آفیسر اکبر ناصر خان نے وزیراعلی کو بریفنگ دی۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.