عالمی عدالت انصاف: بھارتی درخواست مسترد، کلبھوشن یادیو پاکستانی تحویل میں رہیگا

 

پبلک نیوز: بھارت کو ایک اور محاذ پر سبکی کا سامنا کرنا پڑگیا۔ بھارتی جاسوس کمانڈر کلبھوشن یادیو بھارت کو واپس نہیں کیا جائے گا۔ عالمی عدالت انصاف نے کمانڈر کلبھوشن یادیو کی بریت کی بھارتی درخواست مسترد کردی۔ عالمی عدالت نے کلبھوشن کا حسین مبارک پٹیل کے نام سے بھارتی پاسپورٹ اصلی قرار دیا۔

 

عالمی عدالت انصاف کے 15 رکنی بنچ نے بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کیس کا فیصلہ سنا دیا۔ کمانڈر کلبھوشن یادیو بھارت کو واپس نہیں ملے گا۔ عالمی عدالت میں بھی بھارت کو منہ کی کھانا پڑی۔ ججز کے پینل نے پاکستان کا مؤقف درست قرار دے دیا۔

 

عالمی عدالت کے جج عبدالقوی احمد یوسف نے فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ بھارت نے پاکستانی مطالبے پرکلبھوشن کا اصل پاسپورٹ اور کلبھوشن کی شہریت کے دستاویزات نہیں دکھائے۔ عالمی عدالت نے کلبھوشن کا حسین مبارک پٹیل کے نام سے بھارتی پاسپورٹ اصلی قرار دے دیا۔ فیصلے میں کہا گیا کہ کلبھوشن یادیو اسی پاسپورٹ پر17 بار بھارت سے باہرگیا اور واپس آیا۔

 

 

عالمی عدالت نے کلبھوشن کے خلاف پاکستانی فوجی عدالت کا فیصلہ چیلنج کرنے کی بھارتی استدعا بھی مسترد کر دی۔ عالمی عدالت نے کہا کہ کلبھوشن یادیو پرجاسوسی کا الزام ہے۔ البتہ ویانا کنونشن لاگو ہو گا۔ جو قونصلر رسائی سے متعلق ہے۔

 

عالمی عدالت نے فیصلے میں کہا کہ ویانا کنونشن جاسوسی کرنے والے قیدیوں کو قونصلر رسائی سے محروم نہیں کرتا۔  اس لیے پاکستان بھی کمانڈر کلبھوشن یادیو کو قونصلر رسائی دے اور اسے دی جانے والی سزا پر بھی نظرثانی کرے۔

 

واضح رہے کہ بھارتی خفیہ ایجنسی ’را‘ کے جاسوس کلبھوشن یادیو کو مارچ 2016 میں بلوچستان سے گرفتارکیا گیا تھا۔ بھارتی بحریہ کے حاضر سروس افسر نے پاکستان میں دہشت گردی کی متعدد کارروائیوں کا اعتراف کیا تھا۔ جس پرفوجی عدالت نے بھارتی کمانڈر کلبھوشن کو سزائے موت سنائی تھی۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.