بھارت کی سازش ناکام، رضا ربانی آئی پی یو کے رکن منتخب

بلغراد: بھارت کی سازشوں کے باوجود سینیٹر رضا ربانی بین الاقوامی پارلیمانی تنظیم آئی پی یو کی ایشیا پیسیفک گروپ کے رکن منتخب ہو گئے۔

دنیا بھر کی 188 پارلیمان پر مشتمل انٹر پارلیمانی یونین (آئی یو پی) کی 131 ویں جنرل اسمبلی کا اجلاس سربیا کے دارلحکومت بلغراد میں ہوا۔ جس میں اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی قیادت میں پاکستانی پارلیمانی وفد شریک ہوا۔

ایشیا پیسیفک گروپ کا اجلاس اسپیکر اسد قیصر کی زیر صدارت ہوا۔ اجلاس میں ایشیا پیسیفک ممالک کی جانب سے آئی پی یو کی مجلس عاملہ کے لیے متفقہ نمائندہ منتخب کرنا تھا۔ اسپیکر اسد قیصر بین الاقوامی پارلیمانی تنظیم آئی پی یو کی ایشیا پیسیفک گروپ کے موجودہ چیئرمین ہیں۔

اجلاس میں پاکستانی پارلیمانی سفارتکاری کو تاریخی فتح حاصل ہوئی اور بھارت کی تمام چالیں ناکام ہو گئیں۔

ہندوستان کے امیدوار ششی تہور کے مقابلے میں سینیٹر رضا ربانی انٹر پارلیمانی یونین کی ایگزیکٹیو کمیٹی کے رکن منتخب ہو گئے۔ پاکستان کی پارلیمنٹ نے اس اہم عہدے کے لیے سینیٹر رضا ربانی کو نامزد کیا تھا۔

ہندوستانی وفد نے انتخابات مؤخر کرانے کی بھرپور کوشش کی تاہم 34 رکنی ایشیا پیسیفک گروپ کے کسی بھی رکن کی جانب سے اسے پذیرائی نہیں مل سکی۔

آخری وقت میں ہندوستان کی لوک سبھا نے اجلاس کے دوران نامور مصنف اور کانگریس کے رکن لوک سبھا ششی تہور کو امیدوار نامزد کر دیا۔

پاکستان نے گروپ میں فوری خفیہ الیکشن کا مطالبہ کیا۔ خفیہ رائے دہی میں اپنی یقینی ہار کا اندازہ کرتے ہوئے ہندوستانی امیدوار نے اپنا نام واپس لینے کا اعلان کر کے شکست مان لی۔

یہ بھی پڑھیں پاکستان کی بقا کی لڑائی سری نگر میں لڑنا ہو گی، سراج الحق

سینیٹر رضا ربانی کے علاوہ ایشیا پیسیفک گروپ نے سینیٹر شیری رحمان کو کمیٹی برائے پائیدار ترقی، مالیات اور تجارت کا رکن بھی منتخب کر لیا۔

ہندوستانی امیدوار کے انتخاب سے دستبرداری کے اعلان کے بعد سینٹر رضا ربانی بلا مقابلہ متفقہ امیدوار کے طور پر تین سال کے لیے انٹر پارلیمانی یونین کی مرکزی مجلس عاملہ کے ممبر منتخب قرار دے دیئے گئے جبکہ سینٹر جاوید عباسی ڈرافٹنگ کمیٹی کے رکن منتخب ہوئے ہیں۔

اس سے قبل شاندانہ گلزار بھی دولت مشترکہ خواتین کی چیئرپرسن منتخب ہو چکی ہیں۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.