انسانی جان پر سیاست نہیں کی جائے گی، فردوس عاشق اعوان

معاون خصوصی ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ حکومت نوازشریف کو بہترین علاج معالجے کی سہولت فراہم کرہی ہے کیونکہ انسانی جان پر سیاست نہیں کی جائے گی۔

تفصیلات کے مطابق معاون خصوصی ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے وفاقی کابینہ اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کسی کی زندگی کو خطرے کی صورت مین علاج معالجے کی مکمل رعایت دینی چاہیئے۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ اجلاس میں نوازشریف کی صحت کےحوالے سے ذیلی کمیٹی اورمیڈیکل بورڈ کی رپورٹ پیش کی گئی ،وزیراعظم عمران خان کوئی بھی فیصلہ کرنے سے پہلے کابینہ ارکان کی رائے لیتے ہیں اور وزیراعظم معاملے کو سیاست کی بجائے انسانی ہمدردی کی بنیاد پر دیکھ رہے ہیں۔

فردوس عاشق اعوان نے یہ بھی کہا کہ ماضی میں لئے گئے قرضوں کے حوالے سے انکوائری کمیشن کی خبر درست نہیں، انکوائری کمیشن کو 6 ماہ کا وقت دیا گیا ہے جو دسمبر میں پورا ہوگا اسلئے انکوائری کمیشن کی حتمی رپورٹ تک قرضوں سے متعلق کوئی بات نہیں کی جاسکتی۔

میڈیا بریفنگ میں فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ اجلاس میں وزیراعظم عمران خان نے معاشی ٹیم کی کارکردگی کو سراہاتے ہوئے کہا کہ معاشی استحکام کے ساتھ عوامی توقعات پر پورا اتریں گے کیونکہ پاکستان مشکل معاشی چیلنجز پر قابو پارہا ہے۔

معاون خصوصی کا کہنا تھا کہ حکومت صوبائی حکومتوں کی کارکردگی پر بھی نظر رکھے ہوئے ہے جبکہ صوبائی حکومتوں سے ماہانہ کارکردگی رپورٹ بھی مانگی جارہی ہیں۔

فردوس عاشق اعوان کا یہ بھی کہنا تھا کہ عام آدمی تک سبسڈی پہنچانے کیلئے جدید ترین طریقے اپنائے جارہے ہیں جبکہ یوٹیلٹی سٹورز کو عوام کی ضروریات پوری کرنے کیلئے 6 ارب روپے دیئے گئے ہیں۔

معاون خصوصی نے کہا کہ اجلاس میں سی پیک کا مغربی روٹ مکمل کرنے کیلئے بھی اہم فیصلے کئے گئے جبکہ چین کے ساتھ سی پیک کی رفتار تیز کرنے اور جاری منصوبوں کی جلد تکمیل کا عزم کیا ہے۔

فردوس عاشق اعوان نے یہ بھی کہا کہ چاروں صوبوں میں سی پیک منصوبوں پر کوئی سیاست نہیں، حکومت نے سی پیک کا دائرہ کار وسیع کیا ہے اور سی پیک منصوبوں میں لائیو سٹاک اور ماہی پروری جیسے شعبوں کو بھی شامل کیا گیا ہے۔

معاون خصوصی ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے مزید کہا کہ پاکستان کے 21 ملکوں میں 4ہزار 636سے زائد قیدی وطن واپس آئے ہیں اور وزیراعظم کی کاوشوں سے 1594 قیدی سعودی عرب جبکہ 345 ملائیشیا کی قیدوں سے آزاد ہوئے۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.