فضائی آلودگی سے بچوں کی نشوونما اور قوت مدافعت متاثر ہو رہی ہے: رپورٹ

ویب ڈیسک — 

آج کے دور میں پیدا ہونے والے بچے ماحولیاتی تبدیلی کے نقصانات سے محفوظ نہیں ہیں، بچوں کو پیدائش کے ساتھ ہی ماحولیاتی تبدیلی کے سبب صحت سے جڑے کئی مسائل اور نقصانات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

آج درجہ حرارت ماضی کے مقابلے بڑھ چکا ہے جس سے دنیا گرمی میں اضافہ ہوا ہے۔ اس دنیا میں آکر بچوں کو غذائی قلت کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ مختلف بیماریاں ان کے تعاقب میں رہتی ہیں۔

دنیا سیلابوں اور ہر سال بڑھتی گرمی کے خطرات سے دوچار ہے۔ اس لیے یہ نہیں کہا جا سکتا کہ آج کے دور کا ہر بچہ پیدائشی طور پر ماحولیاتی تبدیلیوں سے مکمل طور پر محفوظ ہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے "رائٹرز" کے مطابق "دی لانسیٹ" نامی میڈیکل جریدے میں شائع ہونے والی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ماحولیاتی تبدیلیوں سے پہلے ہی انسانوں کی صحت پر برے اثرات پڑ رہے ہیں جبکہ بیماریوں کی تعداد بھی بڑھتی جارہی ہے۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ موسم کی شدت میں اضافہ ہو رہا ہے جبکہ فضائی آلودگی سے انسانوں پر اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔

رپورٹ میں خبردار کیا گیا ہے کہ اگر فضائی آلودگی اور موسمیاتی تبدیلی کو کنٹرول کرنے کے لیے اب بھی کچھ نہ کیا گیا تو اس کے اثرات پوری نسل کو بیماریوں کی لپیٹ میں لے سکتے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق ماحولیاتی تبدیلی سے سب سے زیادہ بچوں کو خطرات لاحق ہیں۔

مطالعے اور رپورٹ کو مرتب کرنے والی ٹیم کے رکن نک واٹسن کا کہنا ہے کہ ماحولیاتی تبدیلی اور فضائی آلودگی سے بچوں کی جسمانی نشوونما اور قوت مدافعت کا نظام پوری طرح متاثر ہو رہا ہے۔

نک واٹسن نے مزید خبردار کرتے ہوئے کہا کہ بچپن میں صحت کو پہنچنے والے نقصان کے اثرات تاحیات رہتے ہیں۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.