دانیال راحیل کے ساتھ دوستی ہے،فریال محمود

پاکستانی ڈرامہ شائقین میں سے بہت کم افراد کو یہ بات معلوم ہوگی کہ ناموراداکارہ فریال محمود ماضی کی معروف گلوکارہ روحانی بانو کی بیٹی ہیں، پاکستان ڈراما انڈسٹری میں پہچان بنانے والی فریال محمود فلم میں بھی کام کررہی ہیں لیکن گھر سے شوبزتک یہ سفراتنا آسان نہیں تھا۔

کسی مقام تک پہنچنے کیلئے راہ میں آنے والی دشواریوں کا اندازہ انہی کو ہوتا ہے جوان کا سامنا کرتے ہیں، معروف ڈرامہ سیریلز ’’ محبت تم سے نفرت ہے، تم سے ہی تعلق، ببن خالہ کی بیٹیاں اور لال عشق میں کام کرنے والی فریال محمود نے حال ہی میں ثمینہ پیرزادہ کے یوٹیوب پرچلنے والے شو میں شرکت کی اور اپنی زندگی کے کئی اہم گوشے بےنقاب کیے۔

محرومیوں سے بھرپوربچپن گزارنے والی فریال محمود کی والدہ روحانی بانو کراچی اسٹیج کی معروف گلوکارہ و اداکارہ روحانی بانو ہیں جو معروف اداکارہ روحی بانو کی کزن بھی ہیں ۔ فریال نے ثمینہ پیرزادہ کے شو میں بچپن کی محرومیوں کا ذکر کرنے کے علاوہ یہ انکشاف بھی کیا کہ اداکار دانیال راحیل اور ان کی فیملی فریال سے بےپناہ محبت  کرتے ہیں۔

بچپن کے حوالے سے کھل کر بات کرنے والی فریال نے بتایا کہ میرے والد نے دوسری شادی کی اور میرےچھوٹے بھائی اور3 سوتیلی بہنیں ہیں۔ اپنی فیملی کو جوڑنے والا میں واحد ذریعہ ہوں۔ میرے والدین ایک دوسرے سے زیادہ بات نہیں کرتے ،میں 7 سال کی تھی جب ان کے درمیان علیحدگی ہوئی۔ میرے بھائی بھی والد سے بات نہیں کرتے اور انہیں تو یہ بھی نہیں معلوم کہ ان کی بہنیں ہیں ، بہنوں کو بھی یہ علم نہیں کہ ان کے کوئی بھائی بھی ہیں۔

فریال نے کہا کہ والدین کی علیحدگی کے بعدمیں والدہ کے ساتھ رہتی تھی، ہم امریکا منتقل ہوگئے تھے۔ والدہ نے طلاق کے بعد 2 بار شادی کی لیکن دوسرے سوتیلے والد مجھے بالکل پسند نہیں تھے جبکہ ان کے تیسرے شوہر بھی مجھے زیادہ پسند نہیں آئے۔ 16 سال کی عمر میں اپنی والدہ کا گھرچھوڑ نے کے بعد میں ایک ماہ تک اکیلے رہی لیکن جب میرے پاس کھانے کو کچھ نہیں بچا تو اپنے والد کو فون کرکے کہا کہ اگر میری مدد نہ کی تو اس حال میں مرجاؤں گی۔

خود کو سنڈریلا کہنے والی اداکارہ نے کہا کہ زندگی اس وقت واقعی سنڈریلا جیسی ہوگئی تھی،بہت مشکل وقت تھا۔ میں اپنی سوتیلی بہنوں کا خیال رکھتی تھی لیکن سوتیلی والدہ اور والد کے درمیان ہر روز جھگڑا ہوتا تھا۔ والد چاہتے تھے کہ میں گھر سے چلی جاؤں، وہ میری شادی کرنے کے خواہشمند تھے لیکن وزن بہت زیادہ ہونے کے باعث کہتے تھے کہ مجھے دبلا ہونا چاہیے۔

اداکارہ نے کہا کہ والدہ کے انتخاب مجھے ہمیشہ مشکل میں ڈالتے ہیں۔ دوستیں کہتی ہیں کہ بچپن کتنا اچھا تھا لیکن میں کہتی ہوں کہ بچپن کبھی واپس نہ آئے کیونکہ میرا بچپن بالکل اچھا نہیں تھا۔ میرے دوسرے سوتیلے والد بھی ایک غلط انتخاب تھے۔ والدہ کی غیرموجودگی میں 8 سے 11 سال کی عمر تک انہوں نے ہراساں بھی کیا لیکن میں یہ بات نہ تو والدہ کو بتا سکتی تھی نہ بھائیوں کو۔

اداکارہ نے انکشاف کیا کہ حالات سے تنگ آکر کئی بار خودکشی کرنے کی کوشش بھی کرچکی ہوں، میں بےحد جذباتی ہوں، جب بھی والدین کے درمیان کچھ ہوتا تو میں خود کو الزام دیتی۔پہلی کوشش سوتیلی والدہ کی وجہ سے کی۔ والد اور ان کے درمیان جھگڑا ہوا اور سوتیلی والدہ نے مجھ سے کہا کہ جب سے تم میرے گھر آئی میرا گھر برباد ہوچکا ہے۔

اپنی زندگی سے ناخوش فریال نے پاکستان آنے کا فیصلہ کیا لیکن شوبز کا حصہ بننے سے قبل رنگت اور وزن کے باعث انہیں تنقید کابھی سامنا کرنا پڑا، جس کے بعد انہوں نے ڈائیٹنگ اورورزش سے وزن کم کرنے کی ٹھانی۔

اداکارہ کےمطابق وزن کم کرنا اس لیے ضروری تھا کہ ہمیں ایسا کرنا پڑتا ہے تاکہ لوگ تعریف کریں۔ شو بز کا حصہ بنی تو مجھ پر بہت دباؤ تھا۔ یہ اندازہ بھی ہوا کہ مجھے اداکاری نہیں آتی اور میرا ٹیلنٹ اہم نہیں، اگر میں دبلی پتلی اور گوری ہوتی تو سب ٹھیک ہوتا کیونکہ بدقسمتی سے پاکستان میں ٹیلنٹ اتنا اہم نہیں جتنا یہ ہے کہ ہم کتنا دلکش نظر آتے ہیں۔

سانولی لیکن پرکشش نقوش کی حامل فریال نے یہ انکشاف بھی کیا کہ آغازمیں لوگوں نے مجھےبہت مشورے دیے کہ رنگ گورا کرنے کے لیے ٹیکے لگوالو اور پتلی ہوجاؤ، لیکن مجھے اپنی رنگت پسند ہے۔ انتہا سے زیادہ گوری رنگت والے لڑکے لڑکیاں مجھے بالکل نہیں پسند۔

اداکارہ کے مطابق انڈسٹری میں میرا امیج یہ ہے کہ میں بہت مشکل انسان ہوں، جبکہ میری نظرمیں تو میں سب سے آسان ہوں، وقت کی پابند اور ایماندار ہوں، لیکن شاید یہاں لوگ ایمانداری برداشت نہیں کرسکتے۔

فریال نے کہا کہ لائف میں استحکام مجھے خوفزدہ کردیتا ہے کیونکہ میری زندگی میں ہمیشہ بہت زیادہ ڈرامہ رہا۔ اداکارہ نے انکشاف بھی کیا کہ ان کی دوستی دانیال راحیل کے ساتھ ہے ۔ اداکارہ نے کہا کہ دانیال کے لیے تالیاں ہونی چاہییں جس طرح سے وہ میرا خیال رکھتا ہے۔

یاد رہے کہ دانیال راحیل اداکارہ سیمی راحیل کے بیٹے ہیں۔ فریال نے سیمی راحیل کی بےانتہا تعریف کرتے ہوئے کہا کہ کوئی ماں اتنی اچھی کیسے ہوسکتی ہے، وہ مجھ سے بہت پیار کرتی ہیں۔ ہمارے درمیان مسئلہ ہو تو دانیال ان کو کال کرتا ہے اور وہ مجھ سے زیادہ اسی کو سمجھاتی ہیں کہ تمہیں نہیں پتہ اس نے کتنی جدوجہد کی ہے۔

اداکارہ نے کہا کہ میں دانیال راحیل کی والدہ کی بہت شکر گزار ہوں ، وہ مجھ سے کہتی ہیں کہ سب سے پہلے تم ہو اور تمہارا کیرئیرہے۔ میں سوچتی تھی کہ زندگی ایسے ہی گزرے گی لیکن اب کچھ الگ ہے۔

میزبان ثمینہ پیرزادہ کی جانب سےخوف کو پیچھے چھوڑتے ہوئے آگے کی زندگی کا سوچنے کے مشورے پر فریال نے کہا کہ میں ایسا ہی کروں گی۔ دانیال ، اس کی والدہ، اس کی بہن سب مجھ سے اتنا پیار کرتے ہیں کہ میں سوچ بھی نہیں سکتی تھی کہ اس زمین پر اتنی پیار کرنے والی فیملی بھی بستی ہوگی۔

کام کی بات کی جائے تو فریال محمود ان دنوں کم بجٹ میں کامیاب فلم کتکشا بنانے والے ہدایتکار ابوعلیحہ کی کامیڈی فلم ’’ ہاف فرائی‘‘ میں کام کررہی ہیں جس میں ان کے مقابل اداکاریاسر حسین ہیں۔

 

 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.