اسمارٹ فون کے متبادل چوزے، آخر یہ ماجرا کیا ہے؟

انڈونیشین حکومت  نے بچوں کی صحت  کو مدنظر رکھتے ہوئے حیرت انگیز اقدام اٹھانے کا فیصلہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق انڈونیشین حکام نے بچوں کو اسمارٹ فون اورٹی وی سے دور رکھنے کے لیےچوزے فراہم کرنا شروع کرد یے ہیں۔

انڈونیشیا کے شہر بنڈونگ میں اسکول کےبچوں کو سوشل میڈیاسے دور رکھنے کے لیےچکنائزیشن کے نام سے  ایک پروگرام شروع کیا گیا ہےجس سے بچوں کواسمارٹ فون اور ٹی وی کی اسکرین سے دور رکھنے میں مدد ملے گی۔

منصوبے کے افتتاح کے موقعے پر طلبہ میں چوزے تقسیم کیے گئے۔ چوزوں کے ساتھ ایک سائن بورڈ بھی دیا گیا جس پر لکھا تھا کہ ’برائے مہربانی میری اچھی طرح سے دیکھ بھال کریں‘۔

حکام کا  کہنا ہے کہ اس اقدام کا مقصد یہ ہے کہ بچے الیکٹرانک آلات پر کم اور اپنے پالتو جانوروں کی دیکھ بھال میں زیادہ وقت گزاریں۔

پروگرام کے تحت شہر  بھر کےاسکولوں کو 2 ہزار چوزے فراہم کیے جارہے ہیں۔پروگرام سےبچوں کو اسمارٹ فون کی لت سے دور رکھاجاسکے گا۔

تھانوں میں اسمارٹ فون کے استعمال پر پابندیشہر کے میئر اودین محمد دانیال نے کہا کہ اس منصوبے میں نظم و نسق کا ایک پہلو موجود ہے لیکن یہ صرف بچوں کو اسمارٹ فونز سے دور رکھنے کے لیے شروع نہیں کیا گیا بلکہ یہ انڈونیشیا کے صدر کی جانب سے متعارف کرائے گئے اس نیشنل پلان کا حصہ ہے جس کا مقصد طلبہ کی تعلیم کو وسعت دینا ہے۔

واضح رہے کہ اسمارٹ فون  جہاں دور حاضر کی جدید ضرورت بن گیا ہے وہیں اس کے نقصانات بھی آئے روز سننے میں آتے رہتے ہیں۔

دو روز قبل ہی  یوکرائن کی 18 سالہ باکسنگ چیمپئن امینہ بلاخ کانوں میں ہیڈ فون لگائےاوراسمارٹ فون براؤزنگ کرتے ہوئے پٹڑی عبور کرنے کے دوران ٹرین کی ٹکر سے ہلاک ہوگئیں تھیں ۔

عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ باکسنگ چیمپئن کانوں میں ہیڈ فون ہونے کی وجہ سے ریل کے آنے کی آواز نہیں سُن سکیں جبکہ وہ اپنے اسمارٹ فون پر براؤسنگ میں بھی مصروف ہونے کے باعث ریڈ سگنل کو بھی نہیں دیکھ سکیں۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.