حساس معلومات واٹس ایپ کے ذریعےشیئرکرنے پر پابندی

اسرائیلی کمپنی نے وائرس کے ذریعے بیس ممالک کے تقریباً ڈیڑھ ہزار سرکاری حکام کا ڈیٹا چوری کرلیا توپاکستان کی وزارت آئی ٹی نے موبائل فونز اور واٹس ایپ کا ڈیٹا مزید غیر محفوظ ہونے پر اعلی حکام کیلئے نئی ایڈوائزری جاری کر دی ۔

وزارت آئی ٹی کی جانب سے وفاقی سیکرٹریز کو بھیجی گئی ایڈوائزری میں انکشاف ہوا کہ اسرائیلی کمپنی نے وائرس کے ذریعے بیس ممالک کے تقریباً ڈیڑھ ہزار سرکاری حکام کا ڈیٹا چوری کرلیا ہے جس سے تمام سرکاری محکموں کو خبردار بھی کردیا گیا ۔

اسرائیلی کمپنی این ایس او مال ویئر نامی وائرس کے زریعے واٹس ایپ مس کال اور دیگر طریقوں سے موبائل فون کا سارا ڈیٹا چوری کرلیتا ہے جبکہ بیس ممالک کے چودہ سو اعلی حکام اس کا شکار بھی بن چکے ہیں یہ وائرس 28 اپریل سے دس مئی تک چھوڑا گیا تھا ۔

وزارت آئی ٹی کی ایڈوائزری میں کہا گیا ہے کہ اسرائیلی کمپنی نے واٹس ایپ اور فیس بک کے قوانین کی خلاف ورزی کی ۔

ایڈوائزری کے مطابق اہم سرکاری عہدیداروں کو حساس معلومات واٹس ایپ اور دیگر غیر محفوظ ایپس پر شیئر نہ کرنے کا انتباہ جاری کرتے ہوئے وائرس حملوں سے بچاؤ کا راستہ بھی بتا دیا کہ یا تو واٹس ایپ کا نیا ورژن استعمال کریں یا پھر 10 مئی سے پہلے خریدا گیا موبائل فون تبدیل کرلیا جائے ۔

دوسری جانب پاکستان میں سرکاری ملازمین کے لیے واٹس ایپ کی متبادل ایک نئی ایپ متعارف کرانے کی تجویز زیر غور ہے جس کے بعد سرکاری ملازمین کو واٹس ایپ کے ذریعے رابطوں یا حساس معلومات شیئر کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

گزشتہ روز پاکستان کے قومی انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر شباہت علی شاہ نے بی بی سی اردوسے بات کرتے ہوئے تصدیق کی تھی کہ یہ تجویز زیرِ غور ہے اور جلد ہی اس پر فیصلہ ہو جائے گا جبکہ اس ضمن میں بعض کمپنیوں سے بات چیت بھی جاری ہے۔ انھوں نے کہا کہ نئی ایپ کی تیاری دو سے تین ماہ میں مکمل ہو جائے گی۔

 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.