پاکستان اور چین کا سی پیک کی سیکورٹی موثر بنانے پر اتفاق

پاکستان اور چین نے داخلی سیکورٹی کو موثر بنانے کے لئے سپیشل سیکورٹی ڈویژن بنانے کا فیصلہ کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان نے سی پیک سیکورٹی اور داخلی صورت حال کو بہتر بنانے کے لئے پائلٹ پروجیکٹ شروع کرنے کا فیصلہ کر لیا اور اس سلسلے میں چین نے پاکستان کو ہر ممکن تعاون کی یقین دہائی کروا دی۔

بول نیوز کو موصول ہونے والی دستاویزات میں دونوں ممالک کی جانب سے دہشت گردی کے خلاف مل کر جنگ جاری رکھنے کا عزم کا بھی اظہار کیا گیا۔

سی پیک پر کام کی رفتار بہترین ہے، خسرو بختیار

ذرائع کے مطابق وزارت داخلہ کے تعاون سے جلد پائلٹ پروجیکٹ پر کام گوادر سے شروع کیا جائے گا۔

سیکورٹی اخراجات پرادائیگی چائنہ کرنسی میں کی جائے گی اور پاکستان کو اس حوالے سے اپنا موثر کردار ادا کرنا ہوگا۔

ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ وفاقی وزیر داخلہ اعجاز شاہ کی جانب سے بھی رواں ہفتے ملاقات میں چینی سفیر کو ہر ممکن تعاون کی یقین دہائی کروائی گئی تھی جبکہ ملاقات میں سی پیک کی سیکورٹی کے حوالے سے الگ سے سیکورٹی ڈویژن بنانے پر بھی اتفاق کیا گیا تھا۔

واضح رہے اس سو قبل صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے پاکستان چائنہ ایگریکلچرل فورم 2019 کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ پیداوار میں اضافے کیلئے پانی کی بہتر ٹیکنالوجی اور چین کی طرز پر اچھا بیج استعمال کرنا ہوگا۔

صدر مملکت ڈاکٹرعارف علوی نے کہا تھا کہ پانی کی قیمت کا تعین کرنا ضروری ہے کیونکہ ہم کاشتکاری کے لئے پانی کا بہتر استعمال نہیں کررہے۔

ڈاکٹرعارف علوی نے یہ بھی کہا تھا کہ اچھے بیج سے کپاس سمیت زرعی اجناس کی پیداوار بڑھایا جا سکتا ہے جبکہ ہمیں زراعت کے شعبے میں انسانی وسائل کی کارکردگی کو بھی بڑھانا ہے۔

صدر مملکت کا کہنا تھا کہ اس شعبے میں ہم چین کے تجربے سے مستفید ہو سکتے ہیں، ہمیں کاشتکاری کیساتھ فصلوں کو ذخیرہ کرنے کی جدید  ٹیکنالوجی کا بھی استعمال کرنا ہوگا۔

صدرمملکت ڈاکٹرعارف علوی کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان کا باسمتی چاول عالمی شہرت رکھتا ہے، پوری دنیا میں  اس کی طلب ہے لیکن ہمیں پیداوار میں اضافے کے ساتھ ویلیوایڈیشن کو بھی فروغ دینا ہوگا۔


 

WATCH LIVE NEWS

Samaa News TV PTV News Live Express News Live 92 NEWS HD LIVE Pakistan TV Channels

Meta Urdu News: This news section is a part of the largest Urdu News aggregator that provides access to over 15 leading sources of Urdu News and search facility of archived news since 2008.