انجانے میں کر بہیٹھا ہوں۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Poet: m.asghar mirpuri
By: m.asghar mirpuri, birminghaham

انجانے میں کر بیٹھا ہوں تبادلہ دل کا
ابھی تک پوچھا نہیں ہے فیصلہ دل کا

جب گھرا ہوتا ہوں نشیب وفراز میں
کوئی آ کر بڑھا دیتا ہےحوصلہ دل کا

ہر کسی کو اپنا سمجھنے لگتا ہے
میرےلیے یہ بہت بڑا ہے مسئلہ دل کا

میرےدل کاصحرا سنسان پڑارہتاہے
ادھر سےگزرتانہیں کوئی قافلہ دل کا

وہ پل بھر میں میرا دل توڑ دیتےہیں
یہ نہیں جانتےکتنانازک ہےمعاملہ دل کا

توں مجھ میں کھوجائے میں تجھ میں
آ ہم دونوں دور کر لیں یہ فاصلہ دل کا

رات بھریہ چین سےسونےنہیں دیتا
چارہ گرکودکھانا پڑےگایہ آبلہ دل کا

Rate it:
19 Sep, 2018

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: m.asghar mirpuri
Visit 7419 Other Poetries by m.asghar mirpuri »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City