جاگتی ہیں رات بھر آنکھیں

Poet:
By: tanzeemakhtar, doha

جاگتی ہیں رات بھر آنکھیں
جانے کس کی ہیں منتظر آنکھیں

جانے بیٹھا ہے وہ کہاں چھپ کر
*ڈھونڈتی ہیں اِدھر اُدھر آنکھیں

بیٹھو کچھ پل تو سامنے میرے
آؤ دیکھوں میں تم کو بھر آنکھیں

بعد مدت کے دیکھ کر ان کو
اشکوں سے ہوئی ہیں تر آنکھیں

آ بھی جا اب تو سامنے میرے
تھک گئی تجھ کو ڈھونڈ کر آنکھیں

ایک بس تو ہی تو دِکھے ہم کو
دیکھتی ہیں جدھر جدھر آنکھیں

چھوڑ کر ان کو رہ نہ پائیں گے
ہے یہی اب ہمارا گھر آنکھیں

غمِ جدائی میں جانِ جاں اکثر
روتی رہتی ہیں رات بھر آنکھیں

راز کردے نہ یہ بیاں تنظیمؔ
دیکھو رکھنا سنبھال کر آنکھیں

Rate it:
07 Jun, 2020

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: tanzeemakhtar
Visit Other Poetries by tanzeemakhtar »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City