جب انہی کو نہ سنا پائے غم جاں اپنا

Poet: Zia Jalandhari
By: sharjeel, khi

جب انہی کو نہ سنا پائے غم جاں اپنا
چپ لگی ایسی کہ خود ہو گئے زنداں اپنا

نارسائی کا بیاباں ہے کہ عرفاں اپنا
اس جگہ اہرمن اپنا ہے نہ یزداں اپنا

دم کی مہلت میں ہے تسخیر مہ و مہر کی دھن
سانس اک سلسلۂ خواب درخشاں اپنا

طلب اس کی ہے کہ جو سرحد امکاں میں نہیں
میری ہر راہ میں حائل ہے بیاباں اپنا

کیسی دوری اسی شعلے کی ہے ضو میرا جمال
جس سے تابندہ رہا دیدۂ گریاں اپنا

ارمغاں ہیں تری چاہت کے شگفتہ لمحے
بے خودی اپنی شب اپنی مہ تاباں اپنا

اس طرح عکس پڑا تیرے شفق ہونٹوں کا
صبح گلزار ہوا سینۂ ویراں اپنا

ایسی گھڑیاں کئی مجھ ایسوں پہ آئی ہوں گی
وقت نے جن سے سجا رکھا ہے ایواں اپنا
 

Rate it:
28 Sep, 2017

More Zia Jalandhari Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: owais mirza
Visit Other Poetries by owais mirza »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City