دل میں اتر گیا

Poet: م الف ارشیؔ
By: Muhammad Arshad Qureshi (Arshi), Karachi

کہنے لگے کے یہ دل اب الفت سے بھر گیا
سارا خمار شیشہ ء دل میں اتر گیا

اچھا ہوا کہ دل ذرا جلدی سنبھل گیا
چڑھتا ہوا خمار تھا یکسر اتر گیا

آیا وہ میرے پاس تو سینے سے لگ گیا
دامن بھی میرا سارا یوں اشکوں سے بھر گیا

بنتا نہیں ہے اس کا تو کوئی گلہ بھی اب
اس کی خوشی کے واسطے کیا کچھ نہ کر گیا

گذرا مرے قریب سے پھر بھی نہ مل سکا
کتنا عجیب شخص تھا جانے کدھر گیا

آیا برا جو وقت تو سب ہی بدل گئے
تھا وقت وہ کڑا بہت آخر گزر گیا

میں تو مصیبتوں میں گرفتار تھا بہت
ماں کی دعا تھی ساتھ تو میں پھر سنور گیا

Rate it:
13 Nov, 2018

More General Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Muhammad Arshad Qureshi
My name is Muhammad Arshad Qureshi (Arshi) belong to Karachi Pakistan I am
Freelance Journalist, Columnist, Blogger and Poet.​President of Internati
.. View More
Visit 188 Other Poetries by Muhammad Arshad Qureshi »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City