دوسرا عشق ضرورت سے کیا جاتا ہے

Poet: ارشد ارشیؔ
By: Muhammad Arshad Qureshi (Arshi), Karachi

عشق پہلا ہو تو چاہت سے کیا جاتا ہے
دوسرا عشق ضرورت سے کیا جاتا ہے

کون کہتا ہے کہ یہ جرم فقط میرا ہے
عشق دونوں کی شراکت سے کیا جاتا ہے

وقت ایسا بھی کبھی عشق میں آ جاتا ہے
کام پھر سارا مہارت سے کیا جاتا ہے

پیار بھی ہوتا ہے تسبیح کے دانوں جیسا
ورد اس کا بھی حلاوت سے کیا جاتا ہے

اب تعلق نہیں ان سے مرا پہلے جیسا
یاد ہم کو بھی ضرورت سے کیا جاتا ہے

عشق ہوتا ہے کہاں زور زبردستی سے
اک عبادت ہے عقیدت سے کیا جاتا ہے

کیسے ہوتی ہے محبت یہ بتا دوں تجھ کو
طے سفر یہ بڑی ہمت سے کیا جاتا ہے
 

Rate it:
25 Sep, 2018

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Muhammad Arshad Qureshi
My name is Muhammad Arshad Qureshi (Arshi) belong to Karachi Pakistan I am
Freelance Journalist, Columnist, Blogger and Poet.​President of Internati
.. View More
Visit 191 Other Poetries by Muhammad Arshad Qureshi »

Reviews & Comments

Nice one
good luck and stay blessed

By: uzma, Lahore on Sep, 26 2018

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City