رُت بدل گئی

Poet: Syed Zulfiqar Haider
By: Syed Zulfiqar Haider, Dist. Gujranwala ; Nizwa, Oman

رُت بدل گئی وہ بکھری خوشیاں اب کہاں
کھلتے چہرے وہ معصوم شرارتیں اب کہاں

مل کے گزرے ہیں جو حسین پل بھول سکتے نہیں
نازنین ادایئں وہ اُڑتا آنچل اب کہاں

بے غرض محبت تھی ٹمٹما رہی تھی روشنی بھی
تیری بکھری زلفیں وہ جامِ محبت اب کہاں

اک ساتھ گزارے کس قدر حسین لمحات ہم نے
چمکتی آنکھیں متزلزل پاوَں اب کہاں

مل کر بسر کرتے تھے ہم اپنا سارا وقت
بیتی حسین راتیں وہ بکھرے ارمان اب کہاں

گھنٹوں میرے خیالوں میں کھوئے رہتے تھے اب جو انجان ہیں
میرا انتظار کرنا وہ اضطراب کی سی کیفیت اب کہاں

جب اپنے بدل گئے اوروں سے کیا شکوہ کرنا
پیار بھری باتیں وہ محبوب کے وعدے اب کہاں

وہ ہی چلے گئے جن سے تھیں وابستہ خوشیاں میری
پیار بھرے نغمے شرما کر مجھ سے لپٹ جانا اب کہاں
 

Rate it:
16 Oct, 2018

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: Syed Zulfiqar Haider
Visit 50 Other Poetries by Syed Zulfiqar Haider »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

beauty

By: Faryal, Kamonki on Oct, 20 2018

so sad

By: Hina Khan, Karachi on Oct, 20 2018

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City