شب فرقت میں ملن کے ترانے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Poet: m.asghar mirpuri
By: m.asghar mirpuri, birminghaham

شب فرقت میں ملن کےترانےگا رہا ہوں میں
ملن کو بیتاب نا ہو دل کو سمجھارہاہوں میں

یہ نا ہومیرا دوست کسی دن اچانک چلا آئے
راستےمیں پھولوں کےپودے سجارہاہوں میں

زیست کےشجر پراداسی کےسائےچھائےہیں
ایسےعالم میں بھی مسکرائےجا رہا ہوں میں

میرے کسی خط کا میرا یار جواب نہیں دیتا
ہر روز اک نئی چٹھی بجھوارہا ہوں میں

اصغر سےاتنی زیادہ بےرخی اچھی نہیں
یہ بات اس نادان کو سمجھارہا ہوں میں

Rate it:
25 Sep, 2018

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: m.asghar mirpuri
Visit 7419 Other Poetries by m.asghar mirpuri »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City