غموں کی دُھوپ میں سایہ تری رفاقت ہے

Poet: Muhammad Faisal
By: Muhammad Faisal, Karachi

ترے ملن کی آس ہے
جنم جنم کی پیاس ہے

غزل کے روپ میں سنو
بس اتنی التماس ہے

دلِ حزیں میں اِن دنوں
امید ہے نہ یاس ہے

نہیں ہے کوئی غم مگر
بہت یہ دل اداس ہے

ترے بنا اے ہم نشیں
کوئی خوشی نہ راس ہے

نظر سے دور ہے مگر
تُو دل کے میرے پاس ہے

مُشامِ جاں میں آج تک
گئی رُتوں کی باس ہے

 

Rate it:
17 Jan, 2018

More Sad Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS
About the Author: Muhammad Faisal
Visit 76 Other Poetries by Muhammad Faisal »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City