فضا میں کرب کا احساس آب جیسا ہے

Poet: وشمہ خان وشمہ
By: وشمہ خان وشمہ, ملایشیا

فضا میں کرب کا احساس آب جیسا ہے
ہوس کی کھڑکیاں کھولے عذاب جیسا ہے

عجیب رشتے بناتی ہے توڑ دیتی ہے
نئی رتوں کے سفرلاجواب جیسا ہے

یہ دھڑکنوں کے اندھیرے یہ زخم زخم چراغ
کواڑ خالی مکانوں کےخواب جیسا ہے

اٹھا ہ گہرا اندھیرا غضب کا سناٹا
سماعتوں کی فضا میں کتاب جیسا ہے

کدھر سے آتی ہے آوارہ خوشبو ں کی طرح
برہنہ جسم کے سائے گلاب جیسا ہے

نہ رتجگوں کے ہیں چرچے نہ کوئی غم کا الاؤ
سنبھل کے آئے ذرا گھر حساب جیسا ہے

نہ پیش نامۂ اعمال کر ابھی وشمہ
حساب کیسا ہے یہ انتساب جیسا ہے

Rate it:
20 Jan, 2019

More Love / Romantic Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: washma khan washma
I am honest loyal.. View More
Visit 4524 Other Poetries by washma khan washma »

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City