اگر بال ڈائی کروانے کے بعد صحیح شیمپو استعمال نہ کیا جائے تو کیا ہوتا ہے ، نتیجہ دیکھئے ۔

اکثر خواتین کو بالوں کو مختلف رنگوں میں ڈائی کروانے کا بہت شوق ہوتا ہے ، یہی وجہ ہے کہ وہ اکثر اپنے بالوں کو مہنگے ترین بیوٹی پارلرز میں جا کر ڈائی کرواتی دکھائی دیتی ہیں ۔ مہنگے داموں بالوں کو ڈائی کروانے کے بعد وہ انہیں دھونے کیلئے عام شیمپو استعمال کرتی ہیں ، جس سے ان کا مہنگے داموں کروایا جانے والا ہیئر ڈائی خراب ہو جاتا ہے اور انہیں اس بات کا اندازہ بھی نہیں ہو رہا ہوتا ۔ انہیں بس یہی لگتا ہے کہ شایدا ن کے بال ڈائی اچھی طرح نہیں کئے گئے جبکہ حقیقت میں وہ خود اپنے بالوں کے ڈائی کی دشمن ثابت ہورہی ہوتی ہیں اور انہیں اپنے ہی ہاتھوں خراب کررہی ہوتی ہیں ۔

وہ خواتین جنہوں نے اپنے ہئیر ڈائی کروائے ہوئے ہیں ، انہیں اس مضمون میں بتایا جارہاہے کہ کس طرح عام شیمپو ان کے بالوں کے ڈائی کو خراب کرنے کی وجہ بن رہا ہوتا ہے ، آئیں وہ اس بارے میں جانیں ۔

امریکا کے ایک بیوٹی سیلون کی مالکن ریچل ٹریچ نے ہئیر ڈائی اور شیمپو کے استعمال پر ایک تجربہ کیا ۔ انہوں نے دو مختلف شیشے کی گلاسوں میں دو الگ طرح کے شیمپو ڈالے ۔ ایک شیمپو وہ تھا جو ڈائی بالوں کیلئے مخصوص تھا اور دوسرا شیمپو وہ تھا جو عام بالوں کیلئے تیار کیا گیا تھا اور نہایت ہی کم قیمت میں مارکیٹ میں دستیاب تھا ۔ انہوں نے دائیں ہاتھ والے گلاس میں عام شیمپو ملایا اور بائیں ہاتھ والی گلاس میں ہئیر ڈائی کیلئے تیار کردہ شیمپو ملایا ۔

پھر ریچل نے دونوں گلاسز میں ایک ہی طرح کے ڈائی کئے ہوئے بالوں کو ڈال دیا اور اسے اچھی طرح شیمپو میں بھگویا اور تھوڑی دیر تک بالوں کو اس میں رہنے دیا۔

تھوڑی دیر کے بعد دائیں ہاتھ والے گلاس میں بالوں کے ڈائی کا رنگ نظر آنے لگا ، جس سے یہ ثابت ہوا کہ عام شیمپو کو اگر ڈائی کئے ہوئے بالوں میں استعمال کیا جائے تو بالوں کا رنگ تیزی سے اترنے لگتا ہے اور خواتین کو اندازہ نہیں ہو پاتا کہ ان کا شیمپو انہیں نقصان پہنچانے کا باعث بن رہا ہے ۔ جبکہ اس کے برعکس وہ شیمپو جو ڈائی کئے ہوئے بالوں کیلئے تیار کئے جاتے ہیں ، انہیں بالوں میں استعمال کیا جائے تو وہ بالوں کے ڈائی کو خراب نہیں ہونے دیتے اور کلر کو اسی طرح برقرار رکھنے میں مددگار ثابت ہوتے ہیں ۔ اس لئے وہ خواتین جو بالوں کو ڈائی کروانے کے بعد اس بارے میں احتیاط نہیں کرتیں اور جن کا ہئیر ڈائی کچھ ہی دنوں میں خراب ہونے لگتا ہے، انہیں یہ ضرور چیک کرلینا چاہئے کہ آیا وہ صحیح شیمپو استعمال کررہی ہیں یا نہیں ۔ اس کیلئے وہ اسی طرح کوئی تجربہ آزماسکتی ہیں اور اپنے ٹوٹے ہوئے بالوں کو تجربے میں استعمال کرکے اپنے لئے بہتر شیمپو کا خود ہی انتخاب کرسکتی ہیں

YOU MAY ALSO LIKE :

Diy Balon Ko Sahi Shampoo Na Karne Se Kya Hota Hai

Diy Balon Ko Sahi Shampoo Na Karne Se Kya Hota Hai - Read the best tips, tricks & totkay of Beauty Tips. These tips and tricks are specially developed to cater your needs of Beauty Tips. Now, you do not have to visit multiple websites to be aware about the totkay related to Beauty Tips. So, just read the informative content on Diy Balon Ko Sahi Shampoo Na Karne Se Kya Hota Hai. These tips and tricks will surely play a great role in enhancing your beauty.