بلوچ عوام کے حقوق کا مسلسل استحصال ہورہا ہے: عمران خان

19 May, 2017 اب تک
بلوچ عوام کے حقوق کا مسلسل استحصال ہورہا ہے: عمران خانکوئٹہ: (19 مئی 2017) چیئرمین تحریک انصاف نے کہا ہے کہ بلوچ عوام کے حقوق کا مسلسل استحصال ہورہا ہے، اگر موقع ملاتو بلوچستان کے حالات ٹھیک کردیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں کرپشن کے باعث غربت اور بے روزگاری پھیلی ہوئی ہے۔چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا ایوب گراؤنڈ میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ شاندار استقبال پر کوئٹہ والوں کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ بلوچ قوم کے حقوق کا استحصال کیا جارہا ہے، اللہ نے ہمیں موقع دیا تو بلوچستان کے حالات ٹھیک کریں گے، بلوچستان کا پیسا عوام تک نہیں پہنچتا اوپر اوپر ہی کھالیا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ خیبرپختونخوا جیسا بلدیاتی نظام بلوچستان میں بھی لائیں گے۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ بلوچستان پولیس والے مجھے کہ رہے ہیں کہ پختونخوا جیسی پولیس ہمیں بناکردو، اگر موقع ملاتو بلوچستان کی پولیس کو بھی ٹھیک کریں گے۔چیئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ اللہ نے پاکستان کو ہرقسم کے وسائل سے نوازاہے، ناردرن ایریاز کے پہاڑ سوئٹرزلینڈ سے زیادہ خوبصورت ہیں۔ عمران خان نے کہا کہ عوام اپنے آپ سے پوچھیں کہ اتنے وسائل ہونے کے بعد اتنی بے روزگاری کیوں ہے، حکمرانوں کی کرپشن کی وجہ سے ملک میں غربت اور بے روزگاری پھیلی ہوئی ہے۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان سے ہر سال ایک ارب روپے کی منی لانڈرنگ ہوتی ہے، عوام کا پیسا دوبئی میں جائیدادیں خریدنے کیلئے چوری کرکے بھیجا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اب تک 8 سو ارب روپے دبئی بھیجے گئے ہیں اور اگر یہی پیسا ملک میں خرچ ہو تو پاکستان میں غربت اور بے روزگاری ختم ہوجائے گی۔عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان میں ایسٹ انڈیا کمپنی کے راج جیسا قانون چل رہا ہے، ماضی مین ایسٹ انڈیا کمپنی تھی اب شریف اینڈ فیملی کمپنی ہے، یہاں آئین کی نہیں کمپنیوں کی حکومت ہے۔ عمران خان نے کہا کہ سندھ میں زرداری خاندان کی کمپنی چلتی ہے، فاٹا میں مولانا فضل الرحمان اور ان کے بھائیوں کی کمپنی چلتی ہے، بلوچستان میں محمود اچکزئی اور ان کے بھائیوں کی فیملی کمپنی کا بول بالا ہے۔عمران خان نے ہمیشہ کی طرح وزیراعظم نواز شریف کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ نوازشریف قوم کو بتائیں کہ ملک سے باہر ان کے اور ان کے بچوں کے کیا کاروباری مفادات ہیں۔ انہوں نے وزیراعظم کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ نوازشریف! میں آج آپ سے کہتا ہوں قوم کو آپ پر کوئی اعتماد نہیں ہے، وقت آگیا کہ اب آپ قوم سے سچ بولیں۔ عمران خان نے مطالبہ کیا کہ جے آئی ٹی تحقیقات کرے کہ نوازشریف اور اہل خانہ کے ملک سے باہر اور خصوصاً بھارت میں کیا کیا بزنس ہیں۔تحریک انصاف کے چیئرمین کا کہنا تھا کہ حکمرانوں کی جانب سے کلبھوشن یادیو کے کیس کو عالمی عدالت میں معیار کے مطابق پیش نہیں کیا گیا۔ عمران خان نے کہا کہ کلبھوشن نے تسلیم کیا کہ وہ را کا ایجنٹ ہے، کلبھوشن نے کراچی اور بلوچستان میں دہشت گردی کا اعتراف کیا، کلبھوشن نے کراچی میں سیاسی جماعت کو سپورٹ کرنے کا بھی اعتراف کیا ہے۔ عمران خان نے کہا کہ کلبھوشن کو عالمی عدالت بچا لیتی ہے اوربھارت خوش ہوتا ہے، ہمیں یہ سوچنا ہے کہ بھارت کی خوشی میں کس کی خوشی ہے۔یہ بھی پڑھئےحکمرانوں نے ذاتی مفادات کیلئے ملک داؤ پرلگا دیا، عمران خانقومی اقتصادی کونسل نے سالانہ ترقیاتی پروگرام کی منظوری دے دی
 

Watch Live News

 مزید خبریں 
« مزید خبریں
Post Your Comments
Select Language: