Travel & Tourism Articles

Travel & Tourism Articles - When it comes to spending the vacation somewhere travelling comes first in mind, selecting the right destination to enjoy your time is important, you should know about rand.. Read more

Travel & Tourism Articles - When it comes to spending the vacation somewhere travelling comes first in mind, selecting the right destination to enjoy your time is important, you should know about random places to select your vacation. Here you can read articles about random places that will help you to know about the place and spend your good time in vacation.

LATEST REVIEWS

لگا ہے مصر کا بازار دیکھو
امجد سلیم علوی صاحب --- جناب محترم مولا نا غلام رسول کے فرزند ہیں - خود بھی صاحب کتاب ہیں - فیس بک پر اس کالم پر تبصرہ کرتے ہوئے کہتے ہیں “ بہت عمدہ مضمون منیر احمد بھائی، لطف آیا۔ بہت معلوماتی۔ اپنی نالائقی کا اندازہ ہوا۔ بھارت اپنی فلمیں بھیج سکتا ہے تو ہم کیوں نہیں؟ اس دور میں تو ہماری فلمیں بھی ٹکر کی تھیں “
By: Munir Bin Bashir, Karachi on Nov, 10 2018

پاکستان ریلوے----ایک انجینئر نے یہ دیکھا
اس ریستوران میں کھانا کھایا تھا -
https://www.facebook.com/454999341236084/photos/a.733964920006190/1435460743189934/?type=3&theater
By: Munir Bin Bashir, Karachi on Nov, 02 2018

یہ نشانی ‘ یہ علامت ‘ محفوظ رہے گی
پرانی نسل محلے میں قائم ‘آنہ لائبریریوں ‘ کو نہیں بھول سکتی - ابرایم جمالی صاحب نے سچل کالج نواب شاہ سے تعلیم حاصل کی - کتابوں کا شوق ہے اسی جذبے بے کے تحت اسی قسم کی ایک لائبریری قائم کی ہے جہاں سینکڑون کی تعداد میں کتابیں موجود ہیں - ان میں ادبی -تاریخی - سیاسی - معاشرتی - رومانی -جاسوسی سب ہی قسم کی کتب شامل ہیں -- فرعون اور اہرام کے بارے میں بھی کچھ کتب ہیں - مشہور محقق عقیل عباس جعفری بھی ان کی لائبریری کا وزٹ کیا ہے -ابرایم جمالی صاحب نے اور ان کے ایک ساتھی نے اس مضمون کو پڑھنے کے بعد لکھا کہ “ بہت اعلی،،،، زبردست کالم،،، “
By: Munir Bin Bashir, Karachi on Nov, 02 2018

بدھا کےدیس میں (قسط نمبر 2)
بہت عمدہ ۔ اگلی قسط کا انتظار ہے
By: Rabia Rehan, Vancouver on Oct, 28 2018

یہ نشانی ‘ یہ علامت ‘ محفوظ رہے گی
جناب عثمان قاضی کوئٹہ سے تعلق رکھتے ہیں اور کئی زبانوں پر دسترس رکھتے ہیں اور اس سے زیادہ تاریخ پر ان کی گہری نظر ہے - انہوں نے فیس بک پر لکھا
=== قران میں اس فرعون کا نام مذکور نہیں ہے جس کے غرق ہونے کا تذکرہ ہے۔---- اکثر تاریخ دان اس پر متفق ہیں کہ اس کا نام "ثُت موسے" تھا۔ ------ اور وہ پندرھویں صدی قبل مسیح میں گزرا تھا۔ رعمسیس کا تعلق تیرھویں صدی قبل مسیح سے بتایا جاتا ہے =
By: Munir Bin Bashir, Karachi on Oct, 28 2018

یہ نشانی ‘ یہ علامت ‘ محفوظ رہے گی
There is Janab Ansari Abdul Aziz who is on Face book --- I found some informative material about pharaohs in one of his posts -- which gave me an inspiration to develop this write up
i sent the article to him with reference of the material that i had found on his face book
In his reply he wrote as under
<<
Thanks Munir Ahmed Sahab, for all your dedication and hard work on research to produce such an informative papers pharaohs of Egypt..
I am simply impressed on details and deep study that you cared to take.
May Allah (SWT) keep you and your loved ones blessed with best of health and longevity of years in life.>>
By: Munir Bin Bashir, Karachi on Oct, 28 2018

یہ نشانی ‘ یہ علامت ‘ محفوظ رہے گی
سلیم جاوید صاحب ایک انجینئر ہیں لیکن اسلامی تاریخ اور تحقیق سے بھی انکا لگاؤ ہے - صاحب کتب بھی ہیں - یہ کتب کئی ایسے دروازے کھول کر ہمارے خیالات کو ایک نیا رخ دیتے ہیں - فیس بک پر اس مضمون پر بھی تبصرہ کرتے ہوئے ہماری توجہ اس جانب کروائی جہاں ہماری نگاہ نہیں جاتی - وہ لکھتے ہیں
“ ماشاء اللہ بہت خوبصورت لکھا ہے- سوچنے کی بات یہ ہے کہ مسلمانوں کی بجائے عیسائیوں نے یہ سب دریافت کرکے قرآن کے معجزے کی تصدیق کی----------------- میرا خیال ہے کہ اس میں خدائ حکمت یہ ہے ------- کہ اگر مسلمان یہ دریافت کرلیتے تو مولوی بیزار ملحدین نے اسے گھڑا ہوا افسانہ سمجھنا تھا “
By: Munir Bin Bashir, Karachi on Oct, 26 2018

یہ نشانی ‘ یہ علامت ‘ محفوظ رہے گی
بہت خوب ۔۔۔ عمدہ تحریر ۔۔۔ معلومات اور تاریخ سے مزین ہے یہ تحریر ۔۔۔
By: adeel murtaza, kot adu on Oct, 26 2018

یہ نشانی ‘ یہ علامت ‘ محفوظ رہے گی
جناب ممشاد صاحب -- سابق جنرل مینیجر پاکستان اسٹیل نے فیس بک پر پڑھ کر تاثرات میں لکھا
“ بہت ہی عمدہ اور معلومات سے مزین تحریر. مجھے بھی ماسکو میں لینن کی ممی دیکھنے کا اتفاق ہوا تھا “
By: Munir Bin Bashir, Karachi on Oct, 25 2018

سیاحت کا عالمی دن
Well said.....
Excellent work....
By: Zshan , Karachi on Oct, 18 2018

MORE ON ARTICLES
MORE ON HAMARIWEB