سوئے فلک نہ جانب مہتاب دیکھنا
Poet: Ahmed Faraz
By: hassan, khi

سوئے فلک نہ جانب مہتاب دیکھنا
اس شہر دل نواز کے آداب دیکھنا

تجھ کو کہاں چھپائیں کہ دل پر گرفت ہو
آنکھوں کو کیا کریں کہ وہی خواب دیکھنا

وہ موج خوں اٹھی ہے کہ دیوار و در کہاں
اب کے فصیل شہر کو غرقاب دیکھنا

ان صورتوں کو ترسے گی چشم جہاں کہ آج
کمیاب ہیں تو کل ہمیں نایاب دیکھنا

پھر خون خلق و گردن مینا بچائیو
پر چل پڑا ہے ذکر مے ناب دیکھنا

آباد کوئے چاک گریباں جو پھر ہوا
دست رقیب و دامن احباب دیکھنا

ہم لے تو آئے ہیں تجھے اک بے دلی کے ساتھ
اس انجمن میں اے دل بیتاب دیکھنا

حد چاہئے فرازؔ وفا میں بھی اور تمہیں
غم دیکھنا نہ دل کی تب و تاب دیکھنا
 

Rate it: Views: 150 Post Comments
 PREV More Poetry NEXT 
 More Ahmed Faraz Poetry View all
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 06 Jul, 2017
About the Author: Owais Mirza

Visit Other Poetries by Owais Mirza »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.