اوپر بادل نیچے پربت بیچ میں خواب غزالاں کا

Poet: Rais Farogh
By: maaz, khi

اوپر بادل نیچے پربت بیچ میں خواب غزالاں کا
دیکھو میں نے حرف جما کے نگر بنایا جاناں کا

پاگل پنچھی بعد میں چہکے پہلے میں نے دیکھا تھا
اس جمپر کی شکنوں میں ہلکا سا رنگ بہاراں کا

بستی یونہی بیچ میں آئی اصل میں جنگ تو مجھ سے تھی
جب تک میرے باغ نہ ڈوبے زور نہ ٹوٹا طوفاں کا

ہم املاک پرست نہیں ہیں پر یوں ہے تو یوں ہی سہی
اک ترے دل میں گھر ہے اپنا باقی ملک سلیماں کا

رنج کا اپنا ایک جہاں ہے اور تو جس میں کچھ بھی نہیں
یا گہراؤ سمندر کا ہے یا پھیلاؤ بیاباں کا

ہم کوئی اچھے چور نہیں پر ایک دفعہ تو ہم نے بھی
سارا گہنہ لوٹ لیا تھا آدھی رات کے مہماں کا
 

Rate it:
28 Sep, 2017

More Rais Farogh Poetry

POPULAR POETRIES

FAMOUS POETS

About the Author: owais mirza
Visit Other Poetries by owais mirza »
Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>

Reviews & Comments

Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City
Language:    

My Page! Account Login:

(Post your Comments Immediately)
Email
Password
Do not have MyPage! account? Create Now

Guest Login:

(Comments will be online after Moderator Review)
Name
Email
City