مجھ سا مجھ میں اتر رہا ہے کوئی
Poet: Shaikh Khalid Zahid
By: Shaikh Khalid Zahid, Karachi

ویران اندر سے کر رہا ہے کوئی
مجھ سا مجھ میں اتر رہا ہے کوئی

وقت سا تحلیل ہوا چاہتا ہے
خاموش جان سے گزر رہا ہے کوئی

ساتھ چلنے کا وعدہ تو کر لیا تھا
سفرطویل دیکھ کر مکر رہا ہے کوئی

کڑی دھوپ میں بھی تپش نہیں
ہاتھ اٹھائے دعا کر رہا ہے کوئی

دل کے سرتال بگڑے ہوئے ہیں
مجھ سے جیسے بچھڑرہا ہے کوئی

گرد ہی گردہے اور ہم راہی
ہرطرف جیسے بکھر رہا ہے کوئی

Rate it: Views: 44 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 14 Feb, 2018
About the Author: Sh. Khalid Zahid

Take good care of others who live near you specially... View More

Visit 43 Other Poetries by Sh. Khalid Zahid »
 Reviews & Comments
har taraf jaisay bikhar raha hai koi
very nice line
By: Muhammad Tanveer Baig, Islamabad on Mar, 01 2018
Reply Reply to this Comment
شکریہ جناب
By: Sh. Khalid Zahid, Karachi on Mar, 12 2018
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.