ہم پیئیں گے وہ ہمیں پلائیں گے ساقی
Poet: درشہوار
By: Suhaira Hassan, Attock

ہم پیئیں گے وہ ہمیں پلائیں گے ساقی
یوں ہی غم اپنے بھلائیں گے ساقی

رہے گی پیاس باقی توڑ دیں گے جام
گر وہ ہمیں چھوڑ جائیں گے ساقی

بھول جائیں گے رشتہ اپنا مئے کے ساتھ
مئے کدے کو ہی بھول جائیں گے ساقی

چشم تر کا نشہ اترے گا ہوش میں آئیں گے
بال نوچیں گے خود گھاؤ کھائیں گے ساقی

لبادہ اوڑھ لیا ہے شرافت کا آؤ ملو ہم سے
وگرنہ پھر سے بہک بہک جائیں گے ساقی

Rate it: Views: 2 Post Comments
 PREV All Poetry NEXT 
 Famous Poets View more
Email
Print Article Print 30 Jun, 2018
About the Author: Suhaira Hassan

Visit 4 Other Poetries by Suhaira Hassan »

Currently, no details found about the poet. If you are the poet, Please update or create your Profile here >>
 Reviews & Comments
Post your Comments Language:    
Type your Comments / Review in the space below.